’’جن لوگوں کے گال پر تل ہو انہیں دیکھتے ہی فورا شادی کر لینی چاہیے کیونکہ شادی کے بعد وہ ۔۔۔‘‘ماہر نجوم نے انتہائی دلچسپ دعویٰ کر دیا

’’جن لوگوں کے گال پر تل ہو انہیں دیکھتے ہی فورا شادی کر لینی چاہیے کیونکہ ...
’’جن لوگوں کے گال پر تل ہو انہیں دیکھتے ہی فورا شادی کر لینی چاہیے کیونکہ شادی کے بعد وہ ۔۔۔‘‘ماہر نجوم نے انتہائی دلچسپ دعویٰ کر دیا

  

لندن(نیوزڈیسک) جسم پر موجودتلوں کی وجہ سے انسان کی شخصیت کے بارے میں پتا لگایا جاسکتا ہے۔ماہرین فلکیات کا کہنا ہے کہ ان تلوں کی مدد سے ہم یہ بھی پتا لگاسکتے ہیں کہ انسان اپنے جیو ن ساتھی کے ساتھ وفادار ہوگا یا نہیں۔آئیے آپ کو جسم کے مختلف حصوں پر موجود تلوں کاشخصیت پر اثر کے بارے میں بتاتے ہیں۔

گال پر تِل

اگر آپ کی گال پر تِل ہے تو خوش ہوجائیں کہ آپ کی شادی شدہ اور پیار کی زندگی بہت گرمجوش ہوگی،آپ کا جیون ساتھی آپ سے محبت بھی کرے گا اور ساتھ آپ کا وفادار بھی رہے گا۔اگر یہ تِل گال کی بائیں جانب ہے تو قوی امکان ہے کہ آپ کا جیون ساتھی آپ سے بے وفائی کرے گا۔

ماتھے پر تِل

اگر آپ کے ماتھے پر تل ہے تو یہ اس جانب اشارہ کرتا ہے کہ آپ کا جیون ساتھی وفادار ہوگا لیکن ساتھ ہی آپ دونوں کے درمیان محبت کی کم ہوسکتی ہے۔ ایسے لوگ ہر مشکل کا سامنا بہت ہمت اور استقامت کے ساتھ کرتے ہیں۔

تھوڑی پر تِل

یہ اس بات کی غمازی ہے کہ آپ کاجیون ساتھی آپ کے ساتھ زیادہ اتنا رومانٹک نہیں ہوگاجتنا آپ چاہتے ہیں۔

بازو پرتل

دائیں بازو پر تل ہونے کا مطلب ہے کہ آپ کا جیون ساتھی نہ صرف وفادار ہوگا بلکہ وہ آپ کو اس قدر محبت دے گا کہ آپ تمام چیزیں بھول جائیں گے تاہم بائیں بازو پر تِل کی موجودگی شادی میں ناکامی کی طرف اشارہ ہے۔

آنکھ میں تل

اگر تل دائیں آنکھ کے اندر ہوتواس کا مطلب ہے کہ آپ کا جیون ساتھی آپ کو شدید محبت دے گا اور بائیں آنکھ میں تل شادی میں مسائل کی جانب اشارہ ہے۔

بھنوﺅں کے نیچے تل

یہ شادی میں مسائل اورخاندانی جھگڑوں کی جانب ایک اشارہ ہے۔آپ اپنی شادہ شدہ زندگی میں اداسی اور مایوسی کا شکار ہوسکتے ہیں۔

ناک کے درمیان تل

ایسے لوگوں پر زیادہ بھروسہ نہیں کیاجاسکتااور یہ جیون ساتھی کو دوھوکہ دیتے ہیں۔

ناک کی نوک پر تل

اس جگہ پر تل ہونے کی وجہ سے آپ کی جنسی زندگی متاثر ہوسکتی ہے جس کا اثر شادی شدہ زندگی پر منفی ہوتا ہے۔

نچلے ہونٹ

ایسے لوگ محبت کے بہت زیادہ شوقین ہوتے ہیں اور شادی ہونے کے بعد اس عادت کی وجہ سے شادی شدہ زندگی میں مسائل کا شکار ہوتے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -