کاغذات نامزدگی کی وصولی کا عمل جاری

کاغذات نامزدگی کی وصولی کا عمل جاری

اسلام آباد/لاہور (سٹاف رپورٹر،نامہ نگار)عام انتخابات 2018 کیلئے کاغذات نامزدگی فارم کی وصولی کا عمل دوسرے روز بھی جاری رہا۔چیئرمین تحریک انصاف سمیت دیگر جماعتوں کے اہم رہنماؤں کے نامزدگی فارم وصول کیے گئے۔لاہور سے 348 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے جبکہقومی اسمبلی کے 14حلقوں کیلئے 10امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کروا دئیے۔دوسرے روز پی ٹی آئی کے علیم خان ،سابق چیف جسٹس پاکستان افتخار محمد چودھری ،پیپلز پارٹی کے میاں اسلم آرائیں ،اشرف آصف جلالی سمیت متعدد اہم سیاسی رہنماؤں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے۔این اے 124 سے مسلم لیگ ن کے وسیم قارد سمیت دیگر 12 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے،این اے 125 سے جمیل اصغر بھٹی اور سید محمد اجمل سمیت 22 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے،این اے 126 سے 14 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے،این اے 128 سے ڈاکٹر اشرف آصف جلالی سمیت دیگر 26 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جاصل کئے،این اے 129 سے علیم خان، وحید گل اور رانا تجمل حسین 14 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیں،این اے 130 سے عدنان صادق بٹ، آصف شہزاد سمیت 26 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے،این اے 131 سے خواجہ سعد رفیق،سلمان رفیق،شعیب صدیقی ،حامد خان سمیت دیگر 20 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے،این اے 132 سے سہیل شوکت بٹ ، رانا مبشر اقبال، منشاء سندھو اور طاہر بشیر میو سمیت 62 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے،این اے 134 سے 23 سے امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے،این اے 135 سے میاں محمد احمد سمیت 9 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کیے جبکہ این اے 136 سے 12 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے۔کاغذات نامزدگی جمع کروانے کا سلسلہ 8 جون تک جاری رہے گا جس کے بعد امیدواروں کی سکروٹنی کا عمل شروع ہو گا۔الیکشن کمیشن حکام کے مطابق کاغذات نامزدگی کیساتھ ہر امیدوار کو آرٹیکل 62 اور 63 کا بیان حلفی جمع کرانا ہوگا۔ بیان حلفی میں غیرملکی پاسپورٹ، دہری شہریت، حکومتی یوٹیلیٹی بلوں کے نادہندگی اور زیر سماعت فوجداری مقدمات کی تفصیل دینا ہوگی۔

مزید : صفحہ اول