کاغذات نامزدگی بدل کر آئین کی روح کو ختم کر دیا گیا، طاہرالقادری

کاغذات نامزدگی بدل کر آئین کی روح کو ختم کر دیا گیا، طاہرالقادری

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر )پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے کہا کہ آئین کے آرٹیکل 63/62 یتیم ہوتے نظر آرہے ہیں ،آئین کی روح کو ختم کر دیا گیا، چوروں، ڈاکوؤں نے بلاروک ٹوک اسمبلی میں جانا ہے تو نیب، ایف آئی ائے، پولیس کو ختم کر دیں، کیا قانون (بقیہ نمبر13صفحہ12پر )

صرف ان کیلئے ہے جن کی اسمبلیوں تک رسائی نہیں؟ جس بنیاد پر نوازشریف کو خائن قرار دے کر نکالا گیا اس بنیاد کو مسمارکر دیا گیا، چوروں کے ساتھ ساتھ دیانت، امانت اور شرافت بھی پکار رہی ہیں کہ ہمیں حلف نامہ سے کیوں نکالا؟کاغذات نامزدگی کو بدل کر بددیانتوں کیلئے اسمبلیوں کے راستے کھولے گئے، ترمیم شدہ کاغذات نامزدگی مسترد کرتے ہیں،ہماری جدوجہد آئین کو ذبح ہونے بچانا ہے، ایسے نظام کو ٹھوکر سے اڑادینا چاہیے جو رسہ گیروں کیلئے اسمبلیوں کے دروازے کھولے ،یہ آئین کی تضحیک اور 21 کروڑ عوام سے مذاق ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہا کہ قومی اسمبلی اور صوبائی اسمبلیوں کے امیدواروں کے ساتھ مشاورت کا عمل جاری ہے، اس حوالے سے مزید بات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری نظام بدلو تحریک جاری ہے۔انہوں نے کہا کہ اب سیاسی صورت حال جیل کی نماز والی بن رہی ہے جس میں اذان جیب کترا دیتا ہے، تکبیر رسہ گیر کہتا ہے، نمازی چور اور امام ڈاکو ہوتا ہے،اس قسم کی جماعت کا بندوبست کیا جارہا ہے۔آئین کے جن آرٹیکلز نے نافذ ہونا تھا وہ خود تحفظ سے محروم ہو گئے۔ انہوں نے کہا کہ دسمبر 2012 ء میں مینار پاکستان پر تاریخی جلسہ کر کے آرٹیکل 63/62 کا قوم کو سبق پڑھایا اور انتخابی اصلاحات کیلئے جنوری 2013 ء میں 5 روز تک اسلام آباد میں احتجاج کیا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...