کوئی مائی کا لعل کالا باغ ڈیم تعمیر نہیں کر سکتا:اسفند یار ولی

کوئی مائی کا لعل کالا باغ ڈیم تعمیر نہیں کر سکتا:اسفند یار ولی

چارسدہ (بیورو رپورٹ) عوامی نیشنل پارٹی کے مرکزی صدر اسفندیار ولی خان نے کہا ہے کہ وطن عزیز میں پنجاب اپنی بادشاہی اور دوسرے قوموں کو غلام بنانے کے درپے ہیں۔ کوئی مائی کا لعل کالا باغ ڈیم تعمیر نہیں کر سکتا ۔ کالا باغ ڈیم کی تعمیر کیلئے بعض بد بخت سپریم کورٹ گئے ہیں مگر میں چیف جسٹس پر واضح کرنا چاہتا ہوں کہ تمام سٹیک ہولڈر ز کو بٹھا کر ڈیم کے نقصانات اور افادیت سے آگاہی حاصل کریں۔ کالا باغ ڈیم در اصل پنجاب کو سرسبز وشاداب ،سندھ کو بنجر اور پختونخوا کو ڈبونے کا منصوبہ ہے ۔ وہ چارسدہ میں اے این پی کے انتخابی مہم کے آغاز کے حوالے سے ضلعی صدر بیرسٹر ارشد عبدا للہ کی طرف سے افطارڈنر کے موقع پر ورکرز کنونشن سے خطاب کر رہے تھے ۔اس موقع پر این اے 24کے پارٹی ذمہ داران اور عہدیداروں کی کثیر تعداد موجود تھی ۔ اسفندیار ولی خان نے اپنی تقریر میں کہا کہ جنر ل مشرف پر واضح کیا تھا کہ کالا باغ ڈیم اور پاکستان ایک ساتھ نہیں چل سکتے مگر ایک بار پھر کالا باغ ڈیم کی تعمیر کی باتیں ہو رہی ہے مگر میں واضح الفاظ میں بتانا چاہتا ہوں کہ کوئی مائی کا لعل کا لا باغ ڈیم تعمیر نہیں کر سکتا کیونکہ یہ منصوبہ پختونوں کو ڈبونے اور سندھ کو بنجر جبکہ پنجاب کو سر سبز و شاداب کرنے کا منصوبہ ہے ۔ اسفندیار ولی خان نے کہا کہ پنجاب کے محصوص سوچ کے لوگ وطن عزیز پر پنجاب کی بادشاہی اور دوسرے قوموں کو غلام بنانے کے درپے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کے دیگر صوبے بھی وفاق کے اکائی ہیں مگر پنجاب کو بالادست بنایا جا رہا ہے ۔ اسفندیار ولی خان نے کہا کہ وہ پنجاب کے خلاف نہیں مگر پختونوں اور سندھیوں کی تباہی و بر بادی کی قیمت پر پنجاب کی ہریالی ہم کسی صورت بر داشت نہیں کر سکتے ۔ چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کالا باغ ڈیم کے حوالے سے کیس کی سماعت کر رہے ہیں مگر میں ان پر واضح کرنا چاہتا ہوں کہ کالا باغ ڈیم کے نقصانات اور فوائد سے آگاہی حاصل کرنے کیلئے تمام صوبوں اور سٹیک ہولڈرز کو بٹھا دیں تاکہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہو جائے ۔ انہوں نے کہا کہ سوال اٹھایا کہ کالا باغ ڈیم کی بجائے بھاشا ڈیم اور منڈا ڈیم کی تعمیر پر کیوں خاموشی اختیار کی گئی ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول