رمضان شوگر ملز کیس، فرد جرم کی کارروائی کیلئے شہباز شریف اور حمزہ شہبا ز 11جون کو طلب

  رمضان شوگر ملز کیس، فرد جرم کی کارروائی کیلئے شہباز شریف اور حمزہ شہبا ز ...

  

لاہور(نامہ نگار) احتساب عدالت کے جج امجد نذیرچودھری نے رمضان شوگر ملز کیس میں سابق وزیراعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کو 11جون کو طلب کرلیاہے جبکہ فاضل جج نے اس کیس میں پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز کو بھی فاضل جج نے طلبی کے نوٹس جاری کردیئے ہیں،عدالت نے فرد جرم عائد کرنے کے لئے باپ بیٹے کو طلب کیا ہے،عدالت نے سپرنٹنڈنٹ سنٹرل جیل کوہدایت کی ہے کہ آئندہ تاریخ سماعت پر حمزہ شہباز کی پیشی کو یقینی بنایاجائے،احتساب عدالت نے رمضان شوگر ملز ریفرنس میں میاں شہباز شریف اورحمزہ شہباز کی طلبی کا تحریری عبوری حکم جاری کردیاہے،عدالتی تحریری حکم کے مطابق کہاگیاہے کہ آئندہ سماعت پر میاں شہباز شریف بھی ذاتی حیثیت میں پیش ہوں، اس کے ساتھ ساتھ عدالتی تحریری حکم میں کہاگیاہکہ رمضان شوگر ملز ریفرنس میں گرفتار ملزم حمزہ شہباز کو جیل سے لا کر عدالت میں پیش نہیں کیا گیا، ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ سنٹرل جیل محمد ارشد ملزم حمزہ شہباز کو پیش نہ کرنے سے متعلق تحریری وضاحت کے ساتھ پیش ہوئے، ملزم حمزہ شہباز کو کرونا وائرس خدشات کے پیش نظر عدالت میں پیش نہ کرنے کی وضاحت پیش کی گئی، رمضان شوگر ملز ریفرنس لمبے عرصے سے فرد جرم عائد کئے بغیر ملتوی ہو رہا ہے، حمزہ شہباز کو عدالت میں پیش کرنے کے تحریری حکم پر عمل دآمد نہ کرنے والے افسروں کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

شہباز،حمزہ طلبی

لاہور(نامہ نگار)سیشن عدالت نے قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کی طرف سے عمران خان کے خلاف ہتک عزت کے دعویٰ کی جلد سماعت کی متفرق درخواست منظور کرتے ہوئے عمران خان کے وکلاء کو بحث کے لئے طلب کر لیا، ایڈیشنل سیشن جج محمد سہیل انجم نے دعوی کی جلد سماعت کے لئے متفرق درخواست پر سماعت کی،درخواست گزار شہباز شریف کا موقف ہے کہ پی ٹی آئی کے رہنماڈاکٹر بابر اعوان مشیر بننے کے بعد مقدمے میں پیروی نہیں کرسکتے، 3 سال سے مقدمہ کی سماعت جاری ہے لیکن عمران خان نے تحریری جواب تک جمع نہیں کرایا، 60 سماعتوں میں 33 مرتبہ عمران خان نے التواکی درخواستیں دائر کیں، عدالتی آرڈر شیٹ عمران خان کے غیرسنجیدگی اور لاپرواہ رویہ کا منہ بولتاثبوت ہے، 4 جون کو پھر التوا کی درخواست کی گئی کہ عمران خان کے وکیل بابر اعوان کورونا کی وجہ سے اسلام آباد سے لاہور نہیں آسکتے، شہبازشریف کی عمران خان کے وکیل کی طرف سے عدالت کے سامنے یہ بیان دروغ گوئی اور جھوٹی گواہی کے مصداق ہے، ڈاکٹر بابر اعوان کو 8 اپریل کو عمران خان کا مشیر اور وزیر پارلیمانی امور مقرر کیاگیا ہے، لیگل پریکٹیشنرز اینڈ بار کونسلز رولز 1976ء کے تحت کسی اور شعبہ یا نوکری اختیار کرنے پر وکالت کا سرٹیفکیٹ معطل ہوجاتا ہے، تقرری کے ایک ماہ تک پیشہ کی تبدیلی سے آگاہ نہ کرنے والا وکیل مس کنڈکٹ کا مرتکب ٹھہرتا ہے، پروفیشنل مس کنڈکٹ کے مرتکب وکیل کا نام وکلاء کی فہرست سے ہٹادیاجاتا ہے، عدالت سے استدعاہے کہ ہتک عزت کے دعوی کو جلد سماعت کے لئے مقرر کیا جائے،اس کیس کی مزید سماعت10جون کو ہوگی۔

درخواست منظور

مزید :

صفحہ اول -