کورونا ایس ا و پیز پر عمل نہ ہوا تو سخت لاک ڈاؤن نافذ، ایکشن لیں گے: چودھری سرور

    کورونا ایس ا و پیز پر عمل نہ ہوا تو سخت لاک ڈاؤن نافذ، ایکشن لیں گے: چودھری ...

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا ہے کہ کورونا سے بچاؤ کے ایس او پیز پر عمل نہ کرنیوالے کسی معافی کے مستحق نہیں ہوسکتے جن علاقوں میں کورونا کے مر یضوں کی تعداد خطر ناک حدتک بڑ ھے گی وہاں لاک ڈاؤن سخت کر نے سمیت تمام اقدامات کر یں گے۔ ہم پاکستان میں کورونا سے امر یکہ اور جر منی جیسے حالات پیدا نہیں ہونے دیں گے۔کورونا سے بچاؤ کیلئے ایک بھی لمحہ کی کوتاہی کی گنجائش نہیں۔کورونا کو پھیلنے سے روکنے کیلئے سب کو اپنی ذمہ داری پوری کرنا ہوگی۔خدا کیلئے عوام کورونا کو لینے اور دوسروں کو دینے کیلئے خود گھروں سے باہر نہ جائیں۔کورونا بحران سے بے روز گار ہونیوالوں کو ہم کسی صورت تنہا نہیں چھوڑیں گے ہم انکے ساتھ کھڑے ہیں۔ وہ گور نر ہاؤس میں زی گارڈ ن کے چیئر مین محمد توفیق کی جانب سے غر یب خاندانوں کیلئے1لاکھ آٹا عطیہ کر نے کے موقعہ پرمیڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔گور نر پنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ بدقسمتی سے کورونا وباء میں ہر گزرتے دن کیساتھ اضافہ ہورہا ہے اور ہلاکتیں بھی بڑ ھ رہی ہیں اس لیے وقت آچکا ہے کہ ایس او پیز پر ایک بھی لمحہ کی کوتاہی کے بغیر مکمل عملدرآمد کیا جائے۔حکومت بھی واضح کر رہی ہے کہ جو لوگ کورونا سے بچاؤ کیلئے اقدامات مکمل نہیں کر یں گے انکے خلاف سخت ایکشن لیا جائیگا کسی کو کوئی رعایت نہیں دی جائیگی۔ کورونا کی وجہ سے صرف پاکستان ہی نہیں پوری دنیا ہی متاثر ہو رہی ہے او رمعاشی طور پر امر یکہ جیسے ممالک بھی پریشان ہو چکے ہیں،ان حالات میں پاکستان نے بزنس کیمونٹی اور عوام کو معاشی مسائل سے بچانے کیلئے کورونا لاک ڈاؤن میں نر می کردی مگر افسوس کے ساتھ کہنا پڑ تا ہے کہ لوگ لاک ڈاؤن میں نرمی کے بعد سے کورونا کو سنجیدہ نہیں لے رہے اور آج ملک بھر میں کورونا مر یضوں کی تعداد میں اضافے کے ساتھ ساتھ ایک ہی دن میں 80سے زائد ہلاکتیں بھی ہو رہی ہیں۔ اس لیے اگر حالات ایسے ہی رہیں گے تو حکومت کے پاس کورونا کا زیادہ شکار ہونیوالے علاقوں میں لاک ڈاؤن سمیت دیگر اقدامات کے سواکوئی آپشن نہیں ہوگا۔ اْنہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں حکومت مشکل کی اس گھڑی میں غر یب خاندانوں کیساتھ ہے اور ہم بھی پی ڈی این کے پلیٹ فارم سے ابتک 11ملین سے زائد لوگوں کو راشن فراہم کر چکے ہیں۔

چوہدری سرور

مزید :

صفحہ آخر -