سندھ حکومت نے وفاق کااسٹیل ملز کی نجکاری، ملازمین کی برطرفی کا فیصلہ مسترد کر دیا

            سندھ حکومت نے وفاق کااسٹیل ملز کی نجکاری، ملازمین کی برطرفی کا ...

  

کراچی(این این آئی) سندھ حکومت نے اسٹیل ملزکی نجکاری اور ملازمین کی برطرفی کے فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وفاق اسٹیل ملزکی نجکا ری اور ملازمین کو برطرف کرنے کا فیصلہ واپس لے۔اس ضمن میں وزیرزراعت سندھ اسماعیل راہو نے وفاقی فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ ایک ہی جھٹکے میں نوہزار سے زائد خاندانوں کا معاشی قتل ہوگا, وفاق کا یہ فیصلہ سندھ دشمنی اور مزدور دشمنی پر مبنی ہے. انہوں نے سوال کیا کہ فیصل واوڈا نے اعلان کیا تھا کہ نوجوانوں کو کچھ ماہ میں لاکھوں نوکریاں ملیں گی,کیا ان ملاز مین کو برطرف کرکے نوکریاں دوسروں کو دی جائیں گی۔ اسماعیل راہو نے کہا کی نااہل اور سلیکٹیڈ حکومت کاایک کروڑ نوکریوں کاوعدہ اپنے انجام کو پہنچا, وفاق سے اسٹیل ملز ملازمین کی بحالی کا مطالبہ کرتے ہیں. صوبائی وزیر نے کہا کہ عمران خان کہتے تھے کہ بیرون ملک سے پاکستانی نوکریاں لینے آئیں گے, عمران خان بتائیں کہ اب کہاں ہیں وہ لوگ، حقیقت یہ ہے کہ موجودہ حکومت میں لاکھوں افراد بیروزگار ہوچکے ہیں, وفاقی حکومت دو سال میں کسی بھی ادارے میں بہتری نہیں لاسکی, تمام اداروں کا برا حال کردیا گیا ہے, کوئی ایک ادارہ بتاؤ جو ٹھیک کیا ہو. اسماعیل راہو نے کہا کہ عمران خان اور اسد عمر صاحب آپکو اسٹیل ملز کے ورکرز یاد کررہے ہیں, وعدے تو آپ کے ملازمین کے ساتھ تھے مگر آپ تو مزدور دشمنوں کے سرغنہ نکلے۔

اسٹیل ملزکی نجکاری مسترد

مزید :

صفحہ آخر -