حکومت نے معیشت کی تباہی کی ذمہ داری سابق حکومتو ں پر ڈالی،اشرف بھٹی

حکومت نے معیشت کی تباہی کی ذمہ داری سابق حکومتو ں پر ڈالی،اشرف بھٹی

  

لاہور(نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی لاہور کے سنیئر نائب صدر محمد اشرف بھٹی نے کہاہے کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے معیشت کی تباہی کا ذمہ دار پچھلی حکومت کو ٹھہرایا، آئی ایم ایف سے عوام دشمن شرائط پر قرضہ لیا پی ٹی آئی حکومت بتائے اب تک کس شعبہ میں کون سی اصلاحات نافذ کی ہیں غریبوں پر ٹیکسز کا بھاری بوجھ ڈال کر اور اربوں ڈالر قرضہ لے کر ملکی خزانہ بھرنا معیشت میں بہتری نہیں لا سکتا۔ ترقی کے دعوے دار عوام کی حالت ملاحظہ فرمائیں زراعت میں بہتری آئی نہ صنعتی پیداوار میں خاطر خواہ اضافہ ہوا۔ علیم و صحت کے شعبے زوال کا شکار ہیں۔ دیہی علاقوں اور چھوٹے شہروں میں سڑکیں ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہیں کرپشن اور لوٹ مار کا بازار گرم جب کہ گورننس کا نام تک نہیں۔ چار وزرائے خزانہ تبدیل ہو چکے، بیوروکریسی میں اکھاڑ پچھاڑ روزانہ کا معمول بن گیا ہے۔ سول سروس ریفارمز، یکساں نصاب تعلیم، لوگوں کو گھراور نوکریاں فراہم کرنے کے وعدوں پر پانچ فیصد بھی عمل نہیں ہوا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ان کا کہنا تھا کہ حکومت لفظوں کے ہیرپھیراور اعدادوشمار کا جادو دکھانے کی بجائے عوام کی حالت زار پر توجہ دیتی تو شاید مہنگائی، بے روزگاری میں کچھ کمی آتی، مگر مجال ہے جو حکمرانوں نے گزشتہ تین برسوں میں اس جانب کوئی قدم اٹھایا ہو۔ ملک میں پانی کے ذخائرمیں شدید کمی کی رپورٹس آ رہی ہیں۔ بجلی کے ٹرانسمیشن سسٹم کی بہتری پر توجہ نہیں دی گئی۔ توانائی کے نئے ذخائرکی دریافت پر کوئی کام نہیں ہوا۔زراعت کے شعبہ میں جدید بیجوں کی تیاری، جعلی کھاد اور ادویات کے خاتمہ پر کوئی پیش رفت نہیں ہو سکی۔ انھوں نے کہا کہ مقامی مصنوعات کی تیاری اور کھپت کے لیے عالمی منڈیوں کی تلاش ضروری ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -