آڈیٹرجنرل کی کورونا ریلیف پیکیج پررپورٹ پبلک کی جائے: مسلم لیگ (ن) 

آڈیٹرجنرل کی کورونا ریلیف پیکیج پررپورٹ پبلک کی جائے: مسلم لیگ (ن) 

  

لاہور(نیوزایجنسیاں)پاکستان مسلم لیگ (ن) نے کورونا ریلیف پیکیج سے متعلق آڈیٹر جنرل کی رپورٹ منظر عام پر لانے کا مطالبہ کر دیا، تفصیلات کے مطابق ترجمان (ن)لیگ مریم اورنگزیب نے کہا کہ 1200ارب کی خطیر رقم پر آڈٹ رپورٹ پبلک ہونے سے روکی جا رہی ہے پہلے دوائیوں کے اربوں کھا گئے اب کرونا کا ریکیف پیکیج کھا گئے، کیا لوگ ہیں؟کورونا ریلیف پیکیج کے خرچ میں سنگین بے ضابطگیوں کی نشاندہی خود آڈیٹر جنرل نے کی ہے،1200ارب کے کورونا ریلیف پیکیج کے علاوہ آئی ایم ایف سے 1.386ارب ڈالر کورونا کے لئے آئے،  ورلڈ بینک کے 153ملین، ایشیائی بینک کے 300ملین ڈالرزاور یورپی یونین کے 150ملین یوروزکا حساب ابھی رہتا ہے، یہ پیسہ عالمی اداروں نے کورونا وبا کے مقابلے اور عوام کی صحت بچانے کے لئے پاکستانی حکومت کو دیا تھا،آئی ایم ایف فسکل مانیٹر میں بھی اس پیسے کے استعمال پر سوال اٹھایاگیا ہے،معاشی ماہرین 15کھرب کی رقم کا سوال اٹھا کر حکومت سے رسیدوں کا مطالبہ کررہے ہیں، مریم اورنگزیب نے کہا کہ آڈیٹر جنرل پاکستان کی رپورٹ سامنے لائی جائے، قوم کو سچائی کا پتہ چلنا چاہئے حکومت سے رسیدیں مانگنے پر آڈیٹر جنرل کی رپورٹ چھپائی جارہی ہے،اتنی بڑی مقدار میں رقم موجود ہونے کے باوجود حکومت نے ویکسین کی بروقت بکنگ میں کیوں مجرمانہ غفلت برتی؟بروقت ویکسین منگوالی جاتی تو ہزاروں پاکستانیوں کی زندگیاں بچائی جاسکتی تھیں کورونا ریلیف فنڈکے اربوں روپے کے ساتھ بھی وہی ہوا جو آٹا چینی دوائی ایل این جی، اور رنگ روڈ منصوبے میں ہوچکا ہے۔

مسلم لیگ (ن)

مزید :

صفحہ آخر -