عالمی یوم ماحولیات،اے سی سی اے، سی ای آر بی ایکوسسٹم بحالی کیلئے سرگرم

 عالمی یوم ماحولیات،اے سی سی اے، سی ای آر بی ایکوسسٹم بحالی کیلئے سرگرم

  

 ملتان (پ ر)موسمیاتی کارروائی پر گول میزتھیم پر مبنی‘ماحولیاتی نظام کی بحالی‘، پاکستان عالمی یوم ماحولیات کی میزبانی (بقیہ نمبر40صفحہ6پر)

کر رہا ہے عالمی یوم ماحولیات 2021 کے موقع پر، ACCA (ایسوسی ایشن آف چارٹرڈ سرٹیفائڈاکاؤنٹنٹس) اور پاکستان بزنس کونسل Centre for Excellence in Responsible Business (سی ای آر بی) موسمیاتی کارروائی پر تبادلہ خیال کے لئے ایک اعلی سطحی کارپوریٹ گول میز کا انعقاد کر رہا ہے۔ ملک کے اعلی کارپوریٹ قائدین،گول میز سے یہ معلوم ہوگا کہ تنظیمیں کس طرح زیادہ پائیدار اور ماحولیاتی طور پر ذمہ دار ہونے کی طرف موثر طریقے سے منتقلی کرسکتی ہے اورکاروباری رہنماؤں کے لئے ایک دوسرے سے سبق سیکھنے اور زیادہ تعاون کرنے کا ماحول پیدا کریں چیلنجوں سے نمٹنے میں‘کاروباری پیشہ ور افراد حقیقی، اثر انگیز تبدیلی اور اس میں شامل ہونے کے لئے ایک انوکھی پوزیشن میں ہیں پائیدار ترقی کا مرکز SDGs میں سے بہت ساری ذمہ داری کاروبار پر ڈالتی ہے معاشرتی اور ماحولیاتی نظاموں پر ان کی سرگرمیوں اور فیصلوں کے اثرات پر غور کریں۔اے سی سی اے کے پاس کاروبار ی رہنماؤں کے مستقبل میں مزید پائیدار دنیا کی طرف کام کا ایک مضبوط فریم ورک موجود ہے۔ اس گول میز کے ذریعے، ہم امید کرتے ہیں کہ تمام اسٹیک ہولڈرز کو ایک دوسرے سے جوڑیں گے اور کاروباری دنیا کو درکارnet zero innovation طے کرنے میں مدد ملے گی اور اپنے معاشرتی، معاشی اور ماحولیاتی نقوش کی سمت آگے دیکھنا شروع کریں گے۔“۔ سجادہ اسلم، اے سی سی اے پاکستان کے سربراہ‘پاکستان موسمیاتی تبدیلیوں کا شکار آٹھو یں نمبر پر خطرناک ترین ملک ہے۔ اس کے لئے تمام اسٹیک ہولڈرز کو کارپوریٹ رہنماؤں کے ساتھ مل کر کسی بھی مجوزہ حل پر کام کرنے کی ضرورت ہوگی۔ اس عالمی یوم ماحولیات پر، آئیے ہم زمینوں اور سمندروں کی حفاظت کا عزم کریں۔ ”احسان ملک، سی ای او، پاکستان بزنس کونسل اس سال کے مرکزی خیال، موضوع '' ایکو سسٹم کی بحالی '' کے اعتراف میں، اس گفتگو کا اہتمام کیا گیا ہے تاکہ شرکاء کو ماحولیاتی ماحول اور پائیداری چیلنجوں کی کھلی اور تعمیری بات چیت کرنے کا موقع فراہم کیا جاسکے، اور کارپوریٹ سیکٹر کی مدد کے لئے اس پر اپنے خیالات اور حل کا تبادلہ کریں۔ اور دنیا بھر میں اپنا کردار ادا کریں۔اقوام متحدہ کے ذریعہ عالمی سطح پر آگاہی اور ماحولیاتی عمل کو متاثر کرنے کے لئے مشاہدہ کیا جاتا ہے، عالمی یوم ماحولیات ہر سال 5 جون کو منایا جاتا ہے۔سالانہ، ایک ملک کو ذمہ داری سونپی جاتی ہے کہ وہ اس پروگرام کی میزبانی کرے اور ایس ڈی جی پر تبادلہ خیال کرنے کے لئے ایک پلیٹ فارم پیش کرے اور افراد اور تنظیموں کے مابین نیٹ صفر کی دنیا میں منتقلی میں ایک دوسرے کی مدد کرنے پر وسیع تر گفتگو کو ترغیب دے۔ پاکستان رواں سال عالمی یوم ماحولیات کی میزبانی کر رہا ہے جس میں اقوام متحدہ کی دہائی پر ماحولیاتی نظام کی بحالی 2021–2030 کے آغاز کا بھی اشارہ ہے۔ 

یوم ماحولیات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -