شمالی کوریا کو رواں سال غذائی قلت کا سامنا

شمالی کوریا کو رواں سال غذائی قلت کا سامنا
شمالی کوریا کو رواں سال غذائی قلت کا سامنا

  

سیول (رضا شاہ) شمالی کوریا کو گزشتہ سال موسم گرما کے طوفان، سیلاب اور زراعت کے سامان کی کمی کی وجہ سے رواں سال تقریبا 1.35 ملین ٹن خوراک کی قلت کا سامنا کرنا پڑے گا۔ شمالی کوریا کو اپنی آبادی کے لیے سالانہ کم ازکم 5.75ملین ٹن خوراک کی ضرورت ہوتی ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ تخمینی قلت کو پورا کرنا شمالی کوریا کی صلاحیتوں سے باہر ہے۔ تھنک ٹینک کا کہنا ہے کہ غذائی قلت کو پورا کرنے کے لیے لازمی ہے کہ شمالی کوریا غذائی اشیاکی تجارت کو دوبارہ بحال کرے یا چین سے غذائی مدد طلب کرے۔ گزشتہ سال کے طوفان اور موسم گرما کے سیلاب کے نتیجے میں ملک کے اہم کاشتکاری علاقوں کو تباہی کا سامنا ہوا تھا۔ غذائی قلت کی ایک اہم وجہ عالمی سطح پر کورونا وائرس سے احتیاط کے طور پر شمالی کوریا کے اپنے سرحدی علاقوں کو بند کرنا تھا جس کی وجہ سے کاشتکاری کے سامان کے حصول میں بھی کمی آئی۔

مزید :

بین الاقوامی -