سرامکس انڈسٹری کو پانچ ماہ سے بند گیس سپلائی کو فوری بحال کیا جائے

سرامکس انڈسٹری کو پانچ ماہ سے بند گیس سپلائی کو فوری بحال کیا جائے

  لاہور(کامرس رپورٹر)فیڈریشن آف پاکستان چیمبرز آف کامرس اینڈ انڈسٹری(ایف پی سی سی آئی) کے ریجنل چےئرمین خواجہ ضرار کلیم نے حکومت سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ سرامکس انڈسٹری کو پانچ ماہ سے بند گیس سپلائی کو فوری بحال کیا جائے۔ سرامکس انڈسٹری کو نومبر میں ہی گیس کی سپلائی بند کر دی گئی تھی جس سے ایکسپورٹ کے آرڈر منسوخ کرنے پڑے،سرامکس انڈسٹری کو فوری گیس سپلائی بحال کی جائے تاکہ آرڈر پورے کئے جا سکیں۔سرامکس انڈسٹری غیر روایتی اشیاء تیار کرتی ہے جس کو بیرون ملک بہت زیاوہ پذیرائی ملتی ہے جس سے نیشنل انکم میں بھی اضافہ ہو تا ہے۔فیڈریشن چیمبر اس معاملے کو بڑی سنجیدگی سے مانیٹر کر رہی ہے،گیس کی سپلائی نہ ہونے کی وجہ سے اس انڈسٹری سے وابستہ40ہزار سے زیادہ خاندان متاثر ہو ئے ہیں۔ ضرار کلیم نے مزید کہا کہ امن وامان ،توانائی بحران اور ٹیکسز کی بھر مار سے ملک میں کاروبار کرنا مشکل ہو رہا ہے اور پیداواری لاگت میں بھی اضافہ ہو رہا ہے،موجودہ حالات میں مقابلے کی فضاء پیدا کرنا ممکن نہیں کسی بھی صنعت کیلئے سازگار ماحول اور بنیادی سہولیات فراہم کرنا حکومت کی ذمہ داری ہے لیکن ملک میں کاورباری طبقے کو ایسی کوئی سہولت میسر نہیں،ان حالات میں حکومت کو کاروبار کے فروغ کی کو شش کرنی چاہئے تاکہ ملک میں کاروباری سر گرمیوں کو بڑھایا جا سکے۔حکومت ملک میں تیار ہونے والی مصنوعات کو تحفظ فراہم کرئے تاکہ ملک میں صنعت کا پہیہ چلتا رہے،بصورت دیگر ملکی صنعت کو نقصان کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے،انہوں نے کہا کہ مقامی صنعتوں کی بندش سے جہاں قومی خزانے کو نقصان ہو گا وہاں پر بیروزگاری میں بھی اضافہ ہو گا اور افراط زر کی شرح بھی بڑھے گی،ملک کی صنعتی ترقی زبوں حالی کا شکار ہے۔

مزید : کامرس