فیسوں کی مد میں بھاری رقم بٹورنے والے نجی تعلیمی اداروں کے گرد شکنجہ مزید سخت

فیسوں کی مد میں بھاری رقم بٹورنے والے نجی تعلیمی اداروں کے گرد شکنجہ مزید سخت

  

ملتان(نیوز رپورٹر)فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے ماتحت ملتان سمیت تمام ریجنل ٹیکس آفسز نے فیسوں کی مد میں بھاری رقم بٹورنے والے نجی تعلیمی اداروں کے گرد شکنجہ مزید(بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

سخت کر دیا ہے۔ ذرائع کے مطابق ایف بی ار کی جانب سے ملک گیر سطح پر ٹیکس نیٹ میں توسیع کے پروگرام کے تحت ان شعبوں تک رسائی کی جا رہی ہے جو قابل ٹیکس آمدنی کے باوجود ٹیکس نیٹ سے باہر ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ گزشتہ 3 دہائیوں سے نجی شعبے کے تعلیمی اداروں کی ریکارڈ نمو ہوئی ہے جو والدین سے فیسوں و دیگر چارجز کی مد میں ماہانہ کئی ہزار روپے کی وصولیاں کررہے ہیں لیکن ان تعلیمی اداروں کی ایک بڑی تعداد ٹیکس نیٹ سے باہر ہے جنہیں ٹیکس نیٹ میں لانے کے لیے ریجنل ٹیکس آفسز کے خصوصی یونٹ متحرک ہوگیاہے۔ذرائع نے بتایا کہ ایف بی آر نے ملک کے دیگر حصوں کی طرح کراچی بھر میں قائم اسکول، مونیٹسریز، کالجز اور ٹیوشن سینٹرز کو ٹیکس نیٹ میں لانے کی حکمت عملی وضح کی ہے، ذرائع نے مزید بتایا کہ ایف بی آر کے ماتحت براڈنگ آف ٹیکس نیٹ کے اسپیشل ٹیمیں غیر رجسٹرڈ اسکولوں پر چھاپے ماریں گی اور آر ٹی اوز کے چیف کمشنرز کی ہدایت پر شہر بھر غیر رجسٹرڈ اداروں کے لیے آگاہی مہم بھی چلائی جائیگی۔

شکنجہ سخت

مزید :

ملتان صفحہ آخر -