مثالی پولیس نے شہریوں کا جینا حرام کردیا ،قیصر علی خان

مثالی پولیس نے شہریوں کا جینا حرام کردیا ،قیصر علی خان

  

مردان ( بیورورپورٹ) گورنمنٹ کنٹریکٹر قیصرعلی خان نے کہاہے کہ خیبرپختون خوا میں مثالی پولیس شریف شہریوں کا جینا حرام کردیاہے چادراورچاردیواری پائمالی معمول بن گیاہے بے گناہ شہریوں کو مبینہ طورپر جعلی مقدمے میں ملوث کرکے ان سے رقم چھینی جارہی ہے وہ منگل کے روز اپنے بھائیوں وقارعلی خان ایڈوکیٹ ،ذوالفقارعلی ایڈوکیٹس اور ساتھی بشیرخان کے ہمراہ پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے انہوں نے بتایاکہ تیرہ فروری کوتھانہ سٹی پولیس نے ہمارے دوست بشیر نامی تاجر کے گھرپر چھاپہ مارا اور چادراور چاردیواری کا تقدس پائمال کیا مجھے فون پر اطلاع اس نے اطلاع دی جب میں پہنچا پولیس نے مجھے بھی پکڑ کرہمیں چوبیس گھنٹے حبس بے جامیں رکھا اور تیسرے دن اے این ایف کو طلب کرکے ہمیں ان کے حوالہ کیا قیصرعلی خان اوران کے وکلاء کا کہناتھاکہ پولیس نے من گھڑت مقدمہ درج کیاہے اور درج ایف آئی میں چھاپے کی جگہ حاجی کورونہ میں ہمارا حجرہ ظاہر کیاگیاہے حالانکہ سرے سے اس علاقے میں حجرہ نہیں ہے انہوں نے الزام لگایاکہ پولیس نے ان کی گاڑی سے 30لاکھ جبکہ ا س کے دوست بشیر کے گھر سے 20لاکھ نقدی لی ہے اور ایف آئی آر میں 16لاکھ روپے ظاہر کئے گئے ہیں انہوں نے کہاکہ تھانہ سٹی کے ایس ایچ او ذاتیات پر اتر آیاہے انہوں نے آئی جی خیبرپختون خوا سے تحفظ دینے پولیس سے رقم واپس کرنے اور انصاف دلانے کا مطالبہ کیاہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -