بھارتی فضائیہ کو دھول چٹانے والے پاکستانی جے ایف 17تھنڈر کی دنیا معترف

بھارتی فضائیہ کو دھول چٹانے والے پاکستانی جے ایف 17تھنڈر کی دنیا معترف

  

نیویارک(آئی این پی)عالمی جریدوں میں جے ایف 17تھنڈر کی پہلی کامیاب ڈاگ فائیٹ کا چرچا ہونے لگا،بھارتی فضائیہ کو دھول چٹانے والی ایئر کومبیٹ میں پاکستان کے جے ایف 17تھنڈر فائٹر جیٹ نے دنیا بھر میں اپنی دھاک بٹھا دی۔ملٹری ایوی ایشن ویب سائٹ دی ایوی ایشنسٹ کے مطابق مگ 21طیارہ جے ایف 17تھنڈر کا پہلا شکار ہے۔ امریکی آن لائن جریدے بزنس انسائیڈر کے مطابق جیسے ہی میڈیا میں بھارتی مگ گرانے کی خبریں آئیں جے ایف 17تھنڈر کی تیاری میں معاونت فراہم کرنیوالی چین کی کمپنی کے شیئرز کی قیمت صرف 5 منٹ میں 10فیصد بڑھ گئی۔بین الاقوامی میگزین دی ڈپلومیٹ کے مطابق پاکستان چین کی تکنیکی اور لاجسٹیکل معاونت کے بغیر سالانہ 25جے ایف 17تھنڈر تیار کرسکتا ہے۔خود بھارتی اپنے جریدے دی ڈیفنس ورلڈ میں یہ بتاتے ہیں کہ 2017ء میں جب امریکہ نے پاکستان کو ایف 16دینے پر حیلے بہانے بنائے تو اسی وقت پاکستان نے جے ایف 17تھنڈر کو اپنا فرنٹ لائن فائٹر جیٹ بنانے کی ٹھان لی۔ مشرقی ایشیا ء کے آن لائن جریدے آئی کون کے مطابق جے ایف 17تھنڈر اپنی پہلی حقیقی لڑائی جیت گیا۔پاک فضائیہ کے جے ایف 17تھنڈر جنہوں نے پیرس ائیرشومیں دھوم مچادی تھی ۔اس وقت ایک غیرملکی ٹی وی چینل نے جے ایف 17تھنڈر کے بارے میں ایک رپورٹ میں کہاکہ پاک فضائیہ کے جے ایف 17تھنڈر طیارے کئی خصوصیات کے حامل ہیں جبکہ دنیابھرمیں جے ایف 17تھنڈر کے طیاروں کی طرح کم ہی طیارے ہیں جوکہ کسی بھی دوسری فضائیہ کے پاس ہیں ۔ رپورٹ میں کہاگیاکہ جے ایف 17تھنڈر پاکستان اپنے دوست ملک چین کیساتھ مل کربنارہاہے اوریہ دنیاکے کسی بھی بڑے لڑاکاطیارے کانعم البدل ہوسکتے ہیں کیونکہ ان طیاروں میں ہرقسم کے ہتھیارلے جانے کی صلاحیت موجود ہے اوریہ طیارے کسی بھی جنگ کاپانسہ پلٹنے کی بھرپورصلاحیت رکھتے ہیں۔ پاکستان کے مایہ ناز لڑاکا طیارے جے ایف 17تھنڈر کے جدید ترین ورژن بلاک 3 کے ڈیزائن کو حتمی شکل دی جاچکی ہے جس کے بعد یہ چوتھی نسل کے لڑاکا طیاروں سے بھی زیادہ جدید ہوجائے گا اور اپنی صلاحیتوں میں امریکی ایف 16، ایف/اے 18 اور ایف 15؛ روس کے سخوئی 27؛ اور فرانس کے میراج 2000 جیسے مشہور لڑاکا طیاروں تک کو پیچھے چھوڑ دے گا۔ جے ایف 17بلاک 3 کا انجن زیادہ طاقتور ہوگا جس کی بدولت یہ آواز کے مقابلے میں دوگنی سے بھی زیادہ رفتار (Mach 2.0+) سے پرواز کرسکے گا۔ اس میں خاص قسم کے کم وزن لیکن مضبوط مادے استعمال کئے جائیں گے جو ایک طرف اس کا مجموعی وزن زیادہ بڑھنے نہیں دیں گے جبکہ دوسری جانب اسے دشمن ریڈار کی نظروں سے بچنے میں مدد بھی دیں گے۔

جے ایف 17تھنڈر

مزید :

صفحہ اول -