کپاس پیدا کرنے والے ممالک میں پاکستان کا چوتھا نمبر

کپاس پیدا کرنے والے ممالک میں پاکستان کا چوتھا نمبر

  

لاہور(نیوز رپورٹر) پاکستان دنیا بھر میں کپاس پیدا کرنے والے ممالک میں چوتھا بڑا ملک ہے جبکہ پاکستان کی مجمو عی پیداوار کا قریباََ 73 فیصد پنجاب میں پیدا ہوتا ہے ۔کپاس پاکستان کی اہم ترین نقدآور فصل ہے اور ہماری ملک کی معیشت میں ریڑ ھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے ۔ پاکستان کی برآمدات کا 60فیصد حصہ کپاس اور اس سے تیار شدہ مصنوعات سے حاصل ہوتا ہے ۔محکمہ زراعت پنجاب زرعی سائنسدانوں اور ترقی پسند کاشتکاروں کی مشاورت سے کسانوں کے لئے بھرپور اقدامات کررہا ہے ترجمان محکمہ زراعت پنجاب کے مطابق امسال حکومت پنجاب زرعی پالیسی کے تحت ملتان، خانیوال، لودھراں ، وہاڑی، بہاولنگر، بہاولپور، رحیم یار خان،،ڈیرہ غازی خان،لیہ،مظفرگڑھ اور راجن پور کے اضلاع کے کاشتکار کپاس کی منظورشدہ اقسام آئی یو بی- 2013 ،ایف ایچ لالہ زار،ایف ایچ- 142 ،بی ایس- 15 ،ایم این ایچ- 886 پر کروڑوں روپے سبسڈی کی فراہمی کی جا رہی ہے۔

۔سبسڈی کے حصول کے لئے کاشتکار پنجاب سیڈ کارپوریشن،بابا فرید کارپوریشن،نیلم سیڈز،جالندھر پرائیویٹ لمٹیڈ اور ہرل سیڈ کارپوریشن کی کمپنیوں سے واؤچر والے بیگ خرید کریں گے۔یہ سبسڈی تھیلوں میں موجود واؤچر کے ڈریعے اس ماہ کے دوران فراہم کی جائے گی۔اس سبسڈی کے حصول کے لئے کاشتکار بیج کے تھیلے سے نکلے واؤچر کا نمبر اپنے شناختی کارڈ نمبر کے ہمراہ8070 پر ایس ایم ایس کریں اور جوابی ایس ایم ایس موصول ہونے پر سبسڈی پائیں۔ترجمان نے مزید کہا کہ اس سکیم کے تحت کپاس کی منظور شدہ اقسام کی کاشت کو فروغ حاصل ہوگا جس سے کپاس کی آئندہ فی ایکڑ پیداوار میں اضافہ ہوگا۔جس طرح فصل کی موجودگی میں فصل کی دیکھ بھال یعنی ان سیزن مینجمنٹ ضروری ہے اسی طرح فصل کے اختتام کے بعد غیر مو سمی اقدامات یعنی آف سیزن مینجمنٹ آئندہ فصل کی بہتر پیدا وار کے لیے انتہا ئی ضروری ہے۔موسمی حالات کے تناظر میں کپاس کی کاشت کے سلسلے میں محکمانہ تجاویز پر عمل پیرا ہوکر کاشتکار کپاس کی بہتر پیداوار کے حصول میں کامیاب ہوسکتے ہیں۔محکمہ زراعت کا شتکا روں کو کپاس کی غیر مو سمی اقدامات کے با رے میں راہنمائی فرا ہم کر رہاہے تاکہ کپاس کی آئندہ فصل کو نقصا ن دہ کیڑو ں اور بیماریوں کے پیشگی حملہ سے محفو ظ رکھا جا سکے۔گلابی سنڈی کپاس کا ایک انتہائی نقصان دہ کیڑا ہے جو کپاس کی فصل کے بعد اپنی زندگی کا دورانیہ کپاس کی باقیات پر مکمل کرتا ہے ۔گلابی سنڈی کے انسداد کا ایک موثر طریقہ سرمئی نیند سوئی سنڈیوں کی تلفی ہے۔

مزید :

کامرس -