رئیل سٹیٹ سیکٹر اور گھر بنانے کیلئے ایمنسٹی سکیم دی جائے:خالد محمود چودھری

  رئیل سٹیٹ سیکٹر اور گھر بنانے کیلئے ایمنسٹی سکیم دی جائے:خالد محمود چودھری

  

        لاہور(رپورٹ:میاں اشفاق انجم، تصاویر:ایوب بشیر)پشاور سانحہ کی مذمت کرتے ہیں،پاک فوج کے دہشت گردی کے خلاف اقدامات قابل ستائش ہیں،صنعتوں اور آئی ٹی کے لیے حکومتی پیکج کا خیر مقدم کرتے ہیں رئیل اسٹیٹ سیکٹر اور گھر بنانے کے لئے ایمنسٹی سکیم دی جائے،ایف بی آر  ٹیبلز میں اضافہ سے سیلز پرچیز رک گئی ہے وزیر خزانہ مداخلت کرتے ہوئے ٹیبلز ریٹس پر سٹیک ہولڈرکو اعتماد میں لیں ان خیالات کا اظہار چیئرمین ڈی ایچ اے اسٹیٹ ایجنٹس ایسوسی ایشن ڈاکٹر خالد محمود چودھری، سیکرٹری پرائیویٹ ہاؤسنگ سکیمز عامر فدا خان،غنی مارکیٹنگ کے نواز غنی،فلک مارکیٹنگ کے عامر عظمت شیخ،سینئر وائس چیئرمین ڈی ایچ اے عمر افضل باری،باجوہ اسٹیٹ کے گوہر سعید باجوہ،عمر اسٹیٹ کے چودھری محمد اکبر،ہاٹ لائن ایسوسی ایٹس جوہر ٹاؤن کے احسان الحق چودھری،فیصل ٹاؤن ماڈل ٹاؤن پراپرٹی ڈیلرز ایسوسی ایشن کے صدر میاں لطیف نے روزنامہ پاکستان سے خصوصی گفتگومیں کیا۔ چیئرمین ڈاکٹر خالد محمود چودھری نے پشاور سانحہ میں شہید ہونے والوں کے لیے دعائے مغفرت کے بعد کہا کہ پرانے ایف بی آر رٹیلر ریٹس فوری بحال کئے جائیں۔عامر فدا خان نے کہا کہ وزیر اعظم کے تعمیراتی پیکج کی وجہ سے کاروبار میں بہتری آئی تھی،ایف بی آر ریٹس میں 200فیصد اضافہ سے کاروبار کو بریک لگ گئی،نواز غنی اور عامر عظمت شیخ نے ایف بی آر ٹیبلز میں اضافے کو کاروبار کے خلاف سازش قرار دیا، عمر افضل باری، گوہر سعید باجوہ،احسان الحق چودھری، میاں لطیف نے صنعتوں کے لیے ریلیف کا خیر مقدم کرتے ہوئے ایف بی آر ٹیبلز ریٹس میں فوری کمی کا مطالبہ کرتے ہوئے حالیہ فیصلے کو مسترد کر دیا۔ 

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -