لاہور قلندر کی کامیابی بہتر حکمت عملی کا نتیجہ ہے،عاقب جاوید 

  لاہور قلندر کی کامیابی بہتر حکمت عملی کا نتیجہ ہے،عاقب جاوید 

  

خیبر (بیورو رپورٹ)لاہور قلندرز کرکٹ ٹیم کے اونر رانا عاطف اور ٹیم کے کوچ اور پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کرکٹر عاقب جاوید. پی ایس ایل کرکٹ ٹورنمنٹ کے ونر ٹرافی کے ہمراہ لنڈی کوتل ملک دریاخان آفریدی کے حجرہ پہنچ گیا لاہور قلندرز ٹیم کے اونرز اور کوچ و دیگر آفیشل کا لنڈی کوتل ملک دریاخان آفریدی اور پاکستان کرکٹ ٹیم کے سٹار باؤلر شاہین شاہ آفریدی کے حجرہ پہنچنے پر علاقے کے عوام نے ان کا والہانہ استقبال کیا*لاہور قلندرز کے اونر کا ونر ٹرافی لانے کے موقع  ممتاز قبائلی رہنما ملک دریاخان آفریدی. پاکستان کرکٹ ٹیم مایا ناز سٹار باؤلر اور لاہور قلندرز کے کپتان شاہین شاہ آفریدی کے والد ملک ایاز آفریدی. سابق ٹیسٹ کرکٹر ریاض آفریدی ان کے بھائی پولیس کے اسسٹنٹ سب انسپکٹر قمر عباس آفریدی زڑگئی پاکستان کے چیئر مین شاکر آفریدی اور دیگر مشران کے  ہمراہ ونر ٹرافی اٹھا کر خوشی کا اظہار کیا لاہور قلندرز کرکٹ ٹیم کے اونر عاطف رانا اور کوچ سابق کرکٹر عاقب جاوید اور دیگر آفیشل نے ضلع خیبر لنڈیکوتل پنچنے ہر عوام جی طرف سے والہانہ استقبال پر عوام مشران کا خصوصی شکریہ ادا کییا دورہ لنڈیکوتل کے موقع پر لاہور قلندرز کے کو چ اور پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کرکٹر عاقب جاوید نے میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ لاہور قلندرز کی پی ایس ایل 7میں کامیابی کپتان شاہین شاہ افریدی اور دیگر ٹیم کے کھلاڑیوں کی بہتر حکمت عملی اور محنت کا نتیجہ تھا جس کے بعد ٹیم نے فائنل جیت کر ٹرافی اپنے نام کرلی انہوں نے کہا اگر پاکستانمیں والدین اپنے بچوں کی بہتر تربیت دیسکے تو پاکستان کرکٹ ٹیم اور ملک میں شاہین شاہ افریدی کی طرح بہت سے کرکٹر کو اگے جانے کے مواقع مل جائے گا انہوں نے کہا کہ ہیان کے کھلاڑیوں میں بے پناہ ٹیلنٹ موجود ہیں جنہوں نے ہمیشہ کھیل کے مید ان میں پاکستان کا نام روشن کیا ہیں جس کی زندہ مثال پاکستان کرکٹ ٹیم کے سٹار باؤلر شاہین شاہ افریدی ہیں جوکہ پورے ملک اور قوم کے لئے فخر کا مقام ہیں،سابق کرکٹر عاقب جاوید نے کہا کہ قبائلی اضلا ع میں سپورٹس گراؤنڈ نہ ہونے کے باعث کھلاڑیوں کو کھیلوں کی سرگرمیاں جاری رکھنے میں مشکلات کا سامناہیں انہوں نے کہا کہ قبائلی اضلاع میں دو سال پہلے لاہور قلندرز کے لئے کرکٹ کے کھلاڑیوں کی ٹرائل لی گئی تھی اور ائندہ بھی قبائلی علاقوں کے کھلاڑیوں کے ٹرائلز لی جائے گی تاکہ یہاں کے کھلاڑیوں کوکرکٹ کے مزید مواقع مل سکے،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -