سانحہ پشاور، دشمن پہلے بھی ناکام ہوا اب بھی ہوگا‘ لیاقت بلوچ 

  سانحہ پشاور، دشمن پہلے بھی ناکام ہوا اب بھی ہوگا‘ لیاقت بلوچ 

  

ملتان (سپیشل رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی و سیکرٹری جنرل ملی یکجہتی کونسل پاکستان لیاقت بلوچ نے قائدین کے ہمراہ پشاور مسجد میں خودکش حملہ میں نمازیوں کی (بقیہ نمبر2صفحہ10پر)

شہادت اور درجنوں افراد کے زخمی ہونے پرہنگامی اجلاس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ 57افراد کا ناحق قتل پوری قوم کا مشترکہ صدمہ ہے۔ پشاور کے سانحے کے پیچھے امریکا اور بھارت کے ملوث ہونے کو رد نہیں کیا جا سکتا۔ ملک میں فرقہ واریت اور تکفیریت پھیلانے میں دشمن پہلے بھی ناکام ہوا، اب بھی ناکام ہو گا۔ حکومت کو قومی ایکشن پلان پر بلاامتیاز عمل درآمد کرناچاہیے جس پر تمام سیاسی، دینی، سماجی تنظیموں نے اتفاق کیا ہے۔ ملی یکجہتی کونسل کا وفد سوموار اور منگل کو متاثرہ خاندانوں سے یکجہتی کے لیے پشاور جائے گا۔ طویل مدت کے بعد آسٹریلیا کی ٹیم پاکستان آئی ہے۔ دشمن کا ہر حربہ پاکستان کی ساکھ کو خراب کرنے کے لیے ہے، لیکن دینی جماعتوں کا اعلان ہے کہ ہم ملک سے فرقہ واریت، تکفیریت، دہشت گردی کے خلاف متحد ہیں اور ملی وحدت کے لیے اپنی کوششیں جاری رکھیں گے۔ اس موقع پر امیر جماعت اسلامی وسطی پنجاب مولانا جاوید قصوری، علامہ ثاقب اکبر، میاں ذکراللہ مجاہد، حافظ کاظم رضا، مفتی عاشق حسین اور دیگر رہنما بھی موجود تھے۔ ملی یکجہتی کونسل کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ ثاقب اکبر نے اس موقع پر کہا کہ ملی یکجہتی کونسل نے پاکستان کی سوگوار فضا میں دکھی دلوں پر مرحم رکھنے کا کردار ادا کیا ہے، لیکن افسوس کا مقام ہے کہ ابھی تک وفاقی اور کے پی حکومت مظلولموں کے گھر نہیں پہنچی ہے اور نہ ہی شہدا کے لیے کسی قسم کی مدد کا اعلان کیا گیا ہے۔ امیر جماعت اسلامی وسطی پنجاب مولانا جاوید قصوری نے کہاکہ ہمیں اتحاد و اتفاق کے درس کا دامن نہیں چھوڑنا چاہیے۔ 

لیاقت بلوچ 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -