پاکستانیوں کوایک قوم بنائیں گے :عمران خان

پاکستانیوں کوایک قوم بنائیں گے :عمران خان

  



لاہور،خوشاب، جوہر آباد، چنیوٹ (بیورورپورٹ، نمائندگان) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ ،11مئی کو” بلا“ شیروں اور وڈیروںکے ساتھ بہت برا سلوک کرے گا، چوروں کا احتساب کر لیا تو ہم ایک ناقابل تسخیر قوت بن جائیں گے، اب مقابلہ( ن) اور جنون کا ہے اور کبھی کوئی طاقت جنون کو نہیں ہرا سکتی ،بجلی نہ ہونے کے باعث ملکی معیشت تباہ ہورہی ہے ، اب ظلم کا نظام مزید نہیں چلنے دینگے ، غلطیوں سے سبق سیکھ کر قوم کو اپنی حالت خود بدلنی ہو گی ،اقتدار میں آکر سابق بجٹ کے مقابلے میں 5گنا زیادہ تعلیم پر خرچ کرینگے ،نیتوںکا راز اللہ پاک کی ذات جانتی ہے ،میرے خلاف یہودیوں اور قادیانیوں کا شوشہ چھوڑا جا رہا ہے ، میڈیا آزاد ہے اب کوئی لوگوں کو پاگل نہیں بناسکتا۔ خوشاب ،جھنگ، چنیوٹ اور لاہور میں جلسوں سے خطاب کرتے ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں تمام جماعتوں نے مک مکا کرکے لوٹ مار کا بازار گرم کیا اورعوام پر خرچ ہونے والا پیسا خود ہی ہڑپ کرگئے۔ ملک میں بجلی ہے نہ پینے کا صاف پانی،لیکن اب ایسا نہیں ہوگا،وہ اور ڈاکوں عوام کا خون چوسنے والوں کا شکار کرنے آئے ہیں اور سارے پرانے سیاسی اداکار ان کی گرفت میں ہیں،11 مئی کو بلا ان تمام نام نہادعوامی نمائندوں کا برا حال کردے گا۔ شریف برادران نے نوجوانوں کی قیمت لیپ ٹاپ سے لگائی لیکن نوجوان کمپیوٹرپر نہیں بکے گا کیونکہ ان کے اصل کپتان تو وہ ہیں۔چےئرمین عمران خان نے کہا کہ ہم ایک نیا پاکستان بنائیں گے ، کیا عوام اپنی حالت تبدیل کرنے کیلئے تیار ہیں، نئے اور عظیم پاکستان کے نظریہ کیلئے جان مارنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج پارٹنر شپ توڑنے کا وقت آگیا ہے، میں پارٹنر شپ توڑنے میں ماہر ہوں، ملک کا پیسا لوٹنے والوں کے ساتھ بلے نے بڑا برا کرنا ہے، ملک میں کرپشن کا خاتمہ کرنے کیلئے اسی جذبے کو آگے بڑھانا ہوگا۔ہم بھی پیشہ ور سیاستدان لاسکتے تھے لیکن وہ کبھی ادھر کبھی ادھر جاتے ہیں، تحریک انصاف اقتدار میں آکر تعلیم کی ایمرجنسی نافذ کرے گی۔ عمران خان نے کہا کہ اب بلے کا وقت آگیا ہے، 11 مئی کو بلا چوروں، ڈاکووں، ظالموں اورسرکس کے شیروں سے بہت برا سلوک کرے گا، عوام اپنی حالت تبدیل کرنے کیلئے تیار ہوجائیں۔ سیاست کے لئے دین کا استعمال کرنے والوں کو پیغام دینا چاہتا ہوں کہ پاکستان میں اسلام کے نام کا غلط استعمال کرنے والوں کے لئے کوئی جگہ نہیں رہے گی۔ عمران خان نے کہا کہ( ن) اور جنون کا مقابلہ ہونے والا ہے، کبھی کوئی طاقت جنون کو نہیں ہرا سکتی۔ اقتدار میں آکر سب سے پہلے ملک میں تعلیم کا نظام بدلیں گے۔ سکولوں میں اقبالیات پڑھائیں گے۔ نئے پاکستان میں استاد اور جج کی سب سے زیادہ عزت ہو گی۔ سرکاری سکولوں میں پانچ گنا زیادہ فنڈ استعمال کرینگے۔ اقتدار میں آکر ملک کی تقدیر بدل دیں گے۔ عمران خان نے کہا کہ پاکستان مشکل ترین دور سے گزر رہا ہے،ہم بربادی کے دہانے پر کھڑے ہیں، میں جب پیدا تو پاکستان کی عمر 5 سال تھی۔ میں پاکستان کے ساتھ بڑا ہوا۔ آج ملک میں بجلی اور پانی نہیں ہے، لوگ بھوک سے مر رہے ہیں، ملک علیحدگی کی طرف جا رہا ہے۔ آج ہمارے ملک میں ظلم اور ناانصافی کا نظام رائج ہے۔ پاکستان میں طاقتور کے لئے الگ اور غریب کے لئے الگ قانون ہے حالانکہ غریب اور امیر کے لئے ایک ہی قانون ہونا چاہیے۔ اب ہمارے ملک میں ظلم کا نظام نہیں چل سکتا۔ عدل و انصاف کی وجہ سے لوگوں کو تحفظ ملتا ہے۔ ملک میں عدل و انصاف کی وجہ سے قوم اکٹھی ہو جاتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ جو قوم اپنی حالت نہیں بدلتی اللہ پاک بھی اس کی حالت نہیں بدلتا۔ ہمیں اپنی غلطیوں سے سیکھ کر آگے بڑھنا ہو گا۔ چوروں کا احتساب کر لیا تو ہم ایک ناقابل تسخیر قوت بن جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے آباﺅ اجداد کو اپنے ملک پر فخر تھا، دنیا پاکستان کی ڈگری کو مانتی تھی۔ ہم اقتدار میں آکر پاکستانیوں کو ایک قوم بنائیں گے ، عمران خان نے کہاکہ بجلی نہ ہونے کی وجہ سے ہماری انڈسٹری بند ہے، آج لوگ کاروبار بند ہونے کے باعث بھوک سے مر رہے ہیں۔ پاکستان 50 ہزار میگاواٹ بجلی پیدا کرسکتا ہے مگر گزشتہ ادوار میں اس پر کوئی توجہ نہیں دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ کبھی سڑکیں بنا کر اور بھکاری بنا کر قوم کا بھلا نہیں ہوا۔دریں اثناءلاہور میں عزم کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا 17سال سے 11مئی کے میچ کا انتظار کر رہا ہوں ، اس روز ایک طرف پیسہ اور دوسری طرف جنون ہوگا ‘ بیرون ممالک مقیم اربوں پتی پاکستانی ملک میں گورننس کے بہتر ہونے اور عدل و انصاف کے نظام کا انتظار کر رہے ہیں اور جس دن ایسا ہو گیا وہ اپنا سرمایہ پاکستان میں لے آئیں گے‘ میں واحد سیاستدان ہوں جس پر پاکستانی اعتبار کرتے ہیںکہ انکا دیا ہوا پیسے کا غلط استعمال نہیں ہوگا ، انشا اللہ ایک سال میں اپنی قوم سے اتنا پیسہ اکٹھا کریںگے کہ ہمیں کسی سے بھیک اور قرضے مانگنے کی ضرورت نہیں رہے گی ‘ ہم حکومت میں آ کر تعلیمی میدان میں ایمر جنسی نافذ کریں گے ،ایک روٹی ،کپڑا اور مکان اور دوسرا سڑکیں بنانے کے نعرہ لگا رہا ہے لیکن ہم ایک قوم بنائیں گے اسکے بعد ساری منازل خود ہی آسان ہو جائیں گی۔ اس ملک میں بڑے بڑے لیڈر آئے ‘ کسی نے روٹی ‘ کپڑ ااور مکان کا نعرہ لگایا اور کسی نے کہا کہ ہم یہاں سڑکیں بنا دیں گے لیکن میں کہتا ہوںکہ بھکاری بنا کر اور سڑکیں بنا کر ملک کو اپنے پاﺅں پر کھڑا نہیں کیا جا سکتا تحریک انصاف پاکستان کو ایک قوم بنائے گی جب ہم ایک قوم بن جائیں گے تو کوئی ہمار امقابلہ نہیں کر سکے گا ۔ انہوں نے کہا کہ نبی کریم ﷺ نے ایک امت بنائی او رایک ہی امت نظریہ تھا ۔ مسلمانوں کے انصاف کے نظام میںسب کو تحفظ حاصل تھا جب مسلما ن فوجیں رومن امپائر میں داخل ہوئی تو عیسائیوں اور یہودیوں نے مسلمان کو نجادت دہندہ مانا کیونکہ وہ سمجھتے تھے کہ مسلمانوں کے معاشرے میں یہودیوں اور عیسائیوں کو زیادہ انصاف ملتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج کوئی الگ صوبے کی بات کر رہا ہے کوئی سندھی ‘ کوئی پنجابی‘ کوئی اردو سپیکنگ اور یہ سلسلہ بڑھتا جارہا ہے جسکی وجہ یہاں عدل و انصاف کا نہ ہونا ہے ۔

لاہور،فےصل آباد (بیورورپورٹ) پاکستان تحرےک انصاف کے چےئرمےن عمران نے کہا ہے کہ سرکاری سکولوں کو اس قابل بنا دےں گے کہ ےہاں سے پڑھنے والا ہر بچہ وزیر اعظم بنے ےہ میرا خواب ہے سترہ سال سے گےارہ مئی کے مےچ کا انتظار کر رہا تھا اےک تو ٹےم بےٹھ گئی ہے باقی اےک ٹےم باقی رہ گئی ہے اس کا شکار کرنے آےا ہوں انشاءاللہ گےارہ مئی کی شام کو شکرانے کے نفل ادا کرنے کے بعد آزادی کاجشن منائےں گے عمران خان نے کہا کہ کارکن تےار ہو جائے گھر گھر جانا ہے اور نئے پاکستان کا پےغام عوام تک پہنچانا ہے دس دنوں مےں جلسوں کی نصف سنچری مکمل کر لی وہ صوبائی دارالحکومت لاہور مےں انتخابی مہم کے سلسلے مےں جلسہ سے خطاب کر رہے تھےتحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہاہے کہ ملک کو اندھیروں اورمسائل سے دوچار کرنےو الے وہ وفاقی اورصوبائی حکمران ہیں جوپانچ پانچ بار اقتدار میں رہے ۔انہوں نے قومی خزانہ دونوں ہاتھوں سے لوٹا لو گوں کو پینے کا صاف پانی ‘سیوریج کی سہولتیں علاج معالجہ اور تعلیمی سہولتیں نہ دینے والے اب چھٹی بار حکومت بناکر بھی کچھ نہیں کرسکتے ان کا تجربہ صرف مفاد پرستی لوٹ مارکا تجربہ ہے یہ قبضہ گروپ ‘قرضہ خور اورکرپٹ ٹولے اب جان لیں کہ قوم ان کے کرتوت جان چکے ہیں اب تبدیلی کا سونامی آگیا ہے 11مئی کو بلے سے انہیں باشعور ووٹر پھینٹی لگائیں گے ۔فیصل آباد کے تاریخی میدان اقبال پارک دھوبی گھاٹ میں ایک بڑے جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ فیصل آباد میں ریڑھی چھابڑی والے چھوٹے دوکانداروں کے ساتھ ساتھ 30لاکھ محنت کشوں کو بیروزگارکرنے کے ذمہ دار زرداری اورشریف برادران ہیں جو 4سال نورا کشتی کرتے رہے ملکر قوم کو مسائل کے تحفے دینے والے آج پھر نئے وعدے اوردعوے کررہے ہیں ۔ عمران خان نے کہا کہ 18ویں ترمیم منظور کرنے والے محض تیسری بار وزیراعظم بننے کی خواہش کیلئے زرداری کے آلہ کار بن گئے اس ترمیم میں فیصلہ ہو اکہ گیس جس صوبے سے نکلتی ہے اس کا حق ہوگی پھرپنجاب کو کیسے گیس ملتی فیکٹریاں ‘کارخانے بند ہوگئے لاکھوں مزدور بے روزگار ہوگئے یہ لوٹ مار کے تجربہ کار بے شرمی سے ڈھٹائی سے پھرلوٹ مارکیلئے لوٹاگیا سرمایہ خرچ کرکے لوگوں کے ضمیر اورووٹ خریدنے کی کوشش کررہے ہیں ۔ عمران خان نے کہا کہ فیصل آباد کے عوام سے ظلم زیادتی ناانصافی کی گئی تاجر ‘بزنس مین‘محنت کش سب پریشان ہیں ہم ٹیکس کی شرح نہیں بڑھائیں گے بلکہ وصولی بڑھائیںگے ناجائز وصولی کاراستہ بند کریں گے ٹیکس کی شرح ممکن حدتک کم کریں گے ۔تحریک انصاف کے سربراہ نے کہا کہ عمران خان سے کبھی یہ امید نہ رکھنا کہ وہ باہر جاکر بھیک مانگے گا قرضہ مانگے گا امریکہ سے بھیگ لینگے نہ قرضہ ‘دنیا بھر میں موجود پاکستانی سرمایہ فراہم کریں گے قوم کو لوٹا ہوا سرمایہ وصول کریں گے جو ملک اورعوام پر خرچ ہوگا۔ عمران خان نے کہا کہ تعلیم ہماری سب سے اہم ترجیح ہوگی جنگ بدر میں قیدی بننے والوں سے پیارے پیغمبر محمد مصطفےٰ نے کہاتھا کہ دس دس افراد کو لکھنا پڑھنا سکھادیں تو انہیں رہاکردیاجائیگا۔نواز شریف ‘شہباز شریف کہتے ہیںکہ وہ بلٹ ٹرین چلائیں گے سڑک بنائیں گے عمران خان پاکستانی قوم بنائیں گے ۔پھر صوبوں کے لوگ علیحدگی نہیں چاہیں گے جب انہیں حقوق ملیں گے انصاف ملے گا تووہ ملک کے ساتھ کھڑے ہونگے ۔تحریک انصاف کے سربراہ نے کہا کہ میں پاکستان کا مطلب کیا لاالہ الااللہ کا قائل ہوں جہاں اقلیتوں کو تحفظ اورحقوق حاصل ہوں عام لوگوں کو تعلیم علاج اورانصاف مہیا ہو ایک بے گناہ انسان کا قتل پوری انسانیت کا قتل ہے بے گناہوں کا قتل عام روکیں گے ۔امریکہ کی جنگ ختم کردیں گے ۔انہوں نے کہا کہ نوجوانوں کو لیپ ٹاپ دیکر خریدنے کی کوشش کرنے والوں نے جج خریدے سپریم کورٹ پر حملہ کیا قوم کے مال کو ذاتی تشہیر کیلئے استعمال کیا ۔ عمران خان نے کہاکہ شہبا شریف اشتہار میں انصاف دینے کا کہہ رہے ہیں کیا پنجاب حکومت نے انصاف فراہم کیا؟26سال اقتدار میں رہنے کے باوجود کیا انہوں نے پولیس کا نظام درست کیا ‘کیا تعلیم کانظام درست کیا‘صحت کی سہولتیں فراہم کیں ‘لوگوںکو جان ومال کا تحفظ فراہم کیا‘پانچ پانچ بار یاں لینے اورجی بھر کر لوٹ مارکرنے کے باوجود انکا پیٹ نہیں بھرا ۔تحریک انصاف کے رضا کار اورتبدیلی کے خواہش مند گھرگھر جاکر لوگوں کو بیدار اورتیار کریں ۔انہوں نے کہا کہ تیر تو ویسے ہی ٹوٹ گیا ہے اب کاغذی شیر بھی انجام کو پہنچنے والے ہیں ۔ظالموں کو لیٹروں کو مفاد پرستوں کو اس بلے سے سیدھا کرناہے تبدیلی رضا کار گلی محلوں میں پھیل جائیں اورلوگوں کو انقلاب کیلئے تیار کریں ۔ عمران خان نے کہا کہ اب دنیا کی کوئی طاقت سونامی کو نہیں روک سکتی اور11مئی کو شام ہم جشن منارہے ہونگے اللہ کا شکر اداکررہے ہونگے ۔پیپلزپارٹی اورن لیگ کو کئی کئی بار ووٹ دیکر دیکھ لیا اب تحریک انصاف کے انتخابی نشان بلے پر مہر لگاکر دیکھیں ہم پاکستان کو ایک نئی قوم اورپاکستانی قوم کو ایک نیا پاکستان دینگے جو ایک ترقی یافتہ اورخوشحال پاکستان ہوگا۔اس موقع پر تحریک انصاف کے مرکزی رہنما انتخابی مہم کے انچارج اسد عمر‘صوبائی صدر اعجاز چودھری‘ضلعی صدر احمد راحیل‘جنرل سیکرٹری رانا جاوید اشرف دیگر عہدے داروں کے علاوہ تحریک انصاف کے قومی اورصوبائی حلقوں کے ٹکٹ ہولڈر بھی موجود تھے ۔

مزید : صفحہ اول