کرم ایجنسی میں جے یو آئی ف کے جلسے میں دھماکہ، 15 افراد جاں بحق، 40 افراد زخمی

کرم ایجنسی میں جے یو آئی ف کے جلسے میں دھماکہ، 15 افراد جاں بحق، 40 افراد زخمی
کرم ایجنسی میں جے یو آئی ف کے جلسے میں دھماکہ، 15 افراد جاں بحق، 40 افراد زخمی

  



کرم ایجنسی (مانیٹرنگ ڈیسک) وسطی کرم کے علاقے سیواک میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 38 میں انتخابی جلسے میں دھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں 15 افراد جاںبحق اور این اے 37 سے امیدوار عین الدین شاکر سمیت 40 افراد زخمی ہو گئے۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق دھماکہ جمعیت علمائے اسلام ( ف ) کے امیدوار منیر خان کے جلسے میں سٹیج کے قریب ہوا۔ دنیا نیوز کے مطابق دھماکے میں 6 افراد جاں بحق اور 25 افراد زخمی ہوئے۔ جیو نیوز کے مطابق دھماکے میں 3 افراد جاں بحق اور 50 سے زائد افراد زخمی ہوئے ہیں۔ ڈان نیوز کے مطابق دھماکے کے نتیجے میں 14 سے زائد افراد جاں بحق اور40 افراد زخمی ہوئے۔ ڈسٹرکٹ ہسپتال کے ایم ایس نے ہلاکتوں کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ دھماکے میں 7 افراد جاں بحق ہوئے اور 25 زخمی ہوئے ہیں جن میں سے بعض کی حالت تشویشناک ہے۔ جے یو آئی ( ف ) کے ترجمان کے مطابق دھماکے میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 37 سے جے یو آئی ( ف ) کے امیدوار عین الدین شاکر بھی زخمی ہوئے ہیں۔ ایڈیشنل سیکرٹری فاٹا ریاض محسود کے مطابق جلسہ مقامی مدرسے میں منعقد کیا گیا تھا جہاں منیر اورکزئی کے سٹیج سے اترنے کے بعد دھماکہ ہو گیا تاہم منیر اورکزئی اس حملے میں محفوظ رہے۔ این اے 38 کے امیدوار منیر اورکزئی کے سیکرٹری کے مطابق دھماکہ منیر اورکزئی کے سٹیج سے اترنے کے بعد ہوا جس کے نتیجے میں قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 37 سے امیدوار عین الدین شاکر اور منیر اورکزئی کے گارڈز زخمی ہوئے تاہم منیر اورکزئی محفوظ رہے۔ متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے دھماکے کی شدید مذمت کی ہے۔

مزید : کرّم /اہم خبریں