حکومت بینکوں میں دو دن کی چھٹی کا فیصلہ فی الفور واپس لے،پیاف

حکومت بینکوں میں دو دن کی چھٹی کا فیصلہ فی الفور واپس لے،پیاف

  

لاہور(کامرس رپورٹر)پیاف نے حکومت پر زور دیا ہے کہ سرکاری محکموں اور بینکوں میں دو دن کی چھٹی کا فیصلہ فی الفور واپس لے کیونکہ اس سے توانائی کی بچت میں کوئی مدد نہیں ملی البتہ تجارتی و معاشی سرگرمیاں بالخصوص برآمدات سے وابستہ شعبہ بُری طرح متاثر ہورہے ہیں۔ ایک بیان میں پیاف کے چیئرمین ملک طاہر جاوید نے کہا کہ مینوفیکچرنگ سیکٹر کو حکومت کے تعاون کی اشد ضرورت ہے جب یورپین یونین کی جانب سے جی ایس پی پلس سٹیٹس کی صورت میں برآمدات بڑھانے کا ایک بہترین موقع میسر آیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وفاقی حکومت کے ماتحت اداروں اور بینکوں میں دو چھٹیاں تجارتی سرگرمیوں کو بُری کوطرح متاثر کررہی ہیں ۔، اگر دو چھٹیاں بہت ناگزیر ہیں تو بھی پورٹس، کسٹمز اور بینکوں سمیت ایکسپورٹ اور امپورٹ سے متعلقہ وفاقی اداروں کو اس سے مثتثنیٰ قرار دیا جائے۔ پیاف کے چیئرمین نے کہا کہ دنیا بھر میں کہیں بھی کمرشل بینک ہفتے میں دو چھٹیاں نہیں کرتے۔

، حتی کہ جن ممالک میں ہفتے میں پانچ دن کام ہوتا ہے وہاں بھی ہفتے کے روز کمرشل بینک کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں ملک دو چھٹیوں کا ہرگز متحمل نہیں ہوسکتالہذا حکومت فوری طور پر ہفتہ وار اضافی چھٹی ختم کرنے کا اعلان کرے۔

مزید :

کامرس -