تحریک انصاف شکایات کے ازالے کیلئے پارلیمنٹ کا فورم استعمال کرے ‘ منظور وٹو

تحریک انصاف شکایات کے ازالے کیلئے پارلیمنٹ کا فورم استعمال کرے ‘ منظور وٹو

  


لاہور ( این این آئی) پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر میاں منظور وٹو نے تحریک انصاف کی قیادت کو مشورہ دیا ہے کہ وہ اپنی شکایات کے ازالے کے لیے سٹریٹ پالیٹکس کی بجائے پارلیمنٹ کے فورم کو استعمال کرے کیونکہ احتجاجی سیاست ملک میں جمہوریت کو نقصان پہنچا سکتی ہے ۔ ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی انتخابی دھاندلی کی شکایات کو اگر پارلیمنٹ میں زیر بحث لایا جائے تو کوئی وجہ نہیں کہ اسکو منطقی نتیجے تک نہ پہنچایا جا سکے لیکن اس معاملے کو سڑکوں پر لانے سے عدم استحکام پیدا ہو گا جو جمہوریت کے لیے نقصان دہ ہے۔ منظور وٹو نے کہا کہ احتجاجی سیاست اس لیے بھی نہیں کرنی چاہیے کیونکہ اس وقت ملک کو کئی سنگین مسائل درپیش ہیں جو ملک کی سلامتی کے لیے خطرہ ہیں اس لیے سیاستدانوں پر لازم ہے کہ وہ قومی سیاست کو فی الحال پارٹی کی سیاست پر فوقیت دیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک اس وقت مسائل کے دلدل میں ہے جس میں بد ترین انتہا پسندی اور دہشتگردی کے ساتھ مشرقی اور مغربی سرحدوں پر خطرات، سنگین امن عامہ کی صورتحال ، کمزور معیشت، مہنگائی اور بے روزگاری جیسے اسے چیلنجز ہیں جنہوں نے ملک کو جکڑ رکھا ہے اس لیے ضروری ہے کہ ہم اسے مزید خطرات سے دوچار نہ کریں۔ میاں منظور احمد وٹو نے کہا کہ ملک میں جمہوریت کا پودا ابھی اتنا طاقتور نہیں ہوا کہ وہ احتجاجی سیاست کا متحمل ہو سکے ۔انہوں نے خبردار کیا کہ اگر سیاسی دشمنیوں کی بنا پر ملک میں سیاست شروع کی گئی تو جو جمہوریت کے پچھلے سالوں کے فوائد حاصل ہوئے ہیں وہ ضائع بھی ہو سکتے ہیں ۔

منظور وٹو

مزید :

صفحہ آخر -