اتفاق انڈسٹریز کی فروخت میں مخالفت کرنیوالے حصہ دار سے جواب طلب

اتفاق انڈسٹریز کی فروخت میں مخالفت کرنیوالے حصہ دار سے جواب طلب

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ عمر عطاءبندیال نے قرضوں کی ادائیگی کیلئے کالعدم اتفاق گروپ آف انڈسٹریز کی فروخت کی مخالفت کرنے والے وزیر اعظم میاں نواز شریف کے کزن میاں اسلم بشیر کو 9مئی کیلئے طلب کر لیا۔چیف جسٹس عمر عطاءبندیال نے قرضوں کی ادائیگی کیلئے اتفاق فاﺅنڈری کی فروخت کے حوالے سے مختلف درخواستوں کی سماعت کی، نواز شریف خاندان کے وکیل اشتر اوصاف ایڈووکیٹ نے عدالت کو بتایا کہ اتفاق فاﺅنڈر ی اور اسکی ذیلی کمپنیوں اتفاق برادرز اوربرادر سٹیل ملز کے ذمہ 8بینکوں سمیت 9مالیاتی اداروں کے5ارب20کروڑ روپے واجب الاد ہ ہیں ، نواز شریف خاندان کے وکیل نے بتایا کہ نواز شریف سمیت 5 خاندانوں نے قرضوں کی ادائیگی کیلئے اتفاق فاﺅنڈری کی فروخت کی رضا مندی ظاہر کر دی ہے، چھٹے خاندان کا موقف ابھی سامنے نہیں آیا جبکہ ساتویں خاندان میاں بشیر کے بیٹے میاں اسلم بشیر نے فاﺅنڈری کی فروخت کی مخالفت کر دی ہے، اس پر عدالت نے میاں اسلم بشیر کونوٹس جاری کرتے ہوئے 9مئی کو اپنا موقف دینے کیلئے ذاتی حیثیت میں طلب کر لیا۔

مزید :

علاقائی -