گیارہ مئی، احتجاجی تحریک کو ٹھنڈا رکھنے کے لیے اراکین اسمبلی کو خصوصی ٹا سک

گیارہ مئی، احتجاجی تحریک کو ٹھنڈا رکھنے کے لیے اراکین اسمبلی کو خصوصی ٹا سک

  


لاہور(جاوید اقبال)حکومت نے اپوزیشن جماعتوں اور خصوصاً تحریک انصاف کی احتجاجی تحریک کو ٹھنڈا رکھنے کے لیے وزراء اور اراکین اسمبلی کو خصوصی ٹا سک سونپ دیا ہے جس کے لیے وفاقی وزراء پانی اور بجلی کو خصوصی ذمہ داری دی گئی ہے جنہیں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ کم سے کم کرنے کا حکم دیا گیا ہے جبکہ اراکین اسمبلی کو عوام سے رابطہ بڑھانے اور وازارت پیٹرولیم کو پیٹرول کی قیمتوں میں مزید کمی کرنے اور رمضان لمبارک کے لیے عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف فرا ہم کرنے اور اس تشہیر جلد شروع کرنے کا کہا گیا ہے وفاقی اور پنجاب حکومتوں اور و ازارت خوراک کو ہدایات جاری کر دی گئی ہیں انھیں کہا گیا ہے کہ جلد پیکج تیار کر کے حکومت کے حوالے کیا جائے دوسری طرف وازارت ٹرانسپورٹ کو کرایہ میں کمی کے نوٹیفیکیشن جلد کر کے اس پر سختی سے عمل دراآمد کرانے کا حکم دیا گیا ہے ذرائع نے بتایا ہے کہ وزیراعظم نے وفاقی محکموں وزراء ارکان اسمبلی صوبہ پنجاب اور بلوجستان کے وزرائے اعلی کو ہدایات کی ہیں کہ وہ عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف دینے کے اقدامات کریں ۔ذرائع کا کہنا ہے کی ارکان اسمبلی کو عوام سے قریبی رابطے رکھنے مسلم لیگ کی تنظیم کے مختلف ونگز کو متحرک کرنے تاجر صنعت کاروں اور ان سے متعلقہ تنظیموں سے رابطے بڑھانے کا بھی فیصلہ کیا گیا ہے اس سلسلے میں یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن آف پاکستان کو بہت بڑا رمضان پیکج تیار کرنے کا کہا گیا ہے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ یہ انتظامات ۱۱ مئی کو تحریک انصاف کی طرف سے شروع ہونے والی حکومت مخالف تحریک کو ٹھنڈا رکھنے کے لیے کیے گئے ہیں اس حوالے سے پرویز رشید کا کہنا ہے کہ جس طرح تحریک انساف آئین کی عدالت سے ہاری ہے اسی طرح عوام کی عدالت سے بھی اپنا کیس ہارے گی بہتر ہے کہ وہ پارلیمنٹ مین آئے اور اپنے مطالبات اور مسائل سامنے لائے اگر وہ سڑ کوں پر آنا چاہتی ہے تو شوق سے آئے اور اپنا شوق پور ا کریں۔بہتر ہو گا عمران خان کے پی کے کی حکومت اور اسمبلی سے استعفے دیں اور پھر سڑکوں پہ آ جائیں

مزید :

صفحہ آخر -