انسانی دماغ جیسا کمپیوٹر ایجاد

انسانی دماغ جیسا کمپیوٹر ایجاد
انسانی دماغ جیسا کمپیوٹر ایجاد
کیپشن: Computer

  

سان ہوزے (بیورورپورٹ)جب بات ہو بہتر سے بہتر ٹیکنالوجی کی تو قدرت کے بنائے ہوئے سسٹم انسان کے بجائے ہوئے سسٹم سے ناقابل تصور حد تک آگے ہیں۔ اسی لئے انسان جب بہترین چیز ایجاد کرنا چاہتا ہے تو اسے قدرت کے بنائے ہوئے نظام سے ہی رہنمائی لینا پڑتی ہے۔ امریکی سائنسدانوں نے جب کمپیوٹر کے سرکٹ بورڈ بنانے کے لئے دماغ میں موجود قدرتی سرکٹ کی نقل کی تو نتائج حیران کن رہے۔ یہ سرکٹ موجودہ کمپیوٹر کے سرکٹ سے 9 ہزار گنا تیز رفتار ہیں۔ سٹینفرڈ یونیورسٹی کے بائیو انجینئرنگ کے پروفیسر بوہن اور ان کی ٹیم نے ایک ایسا کمپیوٹر تیار کیا ہے کہ جس میں دماغ کے نیوران سے مماثلت رکھنے والے دس لاکھ اجزاء استعمال کئے گئے ہیں اور یہ دفاع کی طرح عربوں کنکشن استعمال کرتا ہے۔ پروفیسر بوہن نے بتایا کہ قدرتی دماغ کے سامنے ہمارے جدید کمپیوٹروں کی کوئی اہمیت نہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے کمپیوٹر نہ صرف سست رفتار ہیں بلکہ دماغ کی نسبت 40 ہزار گنا زیادہ توانائی استعمال کرتے ہیں۔ اس نئی قسم کے سرکٹ بورڈ کا نام ’’نیورو گرڈ‘‘ ہے اور اس کی قیمت 40 ہزار ڈالر ہے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -