بوئنگ طیاروں میں بڑی خرابی کی نشاندہی ،کمپنی نےائیر لائنز کو عجیب وغریب ’علاج‘ بتا دیا

بوئنگ طیاروں میں بڑی خرابی کی نشاندہی ،کمپنی نےائیر لائنز کو عجیب وغریب ...
بوئنگ طیاروں میں بڑی خرابی کی نشاندہی ،کمپنی نےائیر لائنز کو عجیب وغریب ’علاج‘ بتا دیا

  

نیویارک (نیوز ڈیسک) امریکی طیارہ ساز کمپنی بوئنگ کے 787جہازوں کے بارے میں حال ہی میں میڈیا میں یہ خبریں آئیں کہ اگر اس جہاز کا سسٹم مسلسل 248دنوں کے لیئے آف نہ کیا جائے تو اس کے چاروں پاور جنریٹر از خود بند ہوجائیں گے اور جہاز قابو سے باہر ہوکر گر جائے گا۔ اب بوئنگ نے اس مسئلے کے حل کے لیئے ایئر لائنوں کو ایک دلچسپ نسخہ بتایا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ طیارے کو اس مسئلے سے بچانے کیلئے اس کے سسٹم کو آف کرکے دوبارہ آن کرلیں اور یہ کام وقتاً فو قتاً کرتے رہیں۔ بوئنگ نے یہ ہدایت نامہ امریکی ڈیپارٹمنٹ آف ٹرانسپورٹ کے فیڈرل ایوی ایشن ایڈمنسٹریشن ادارے کے ذریعے جاری کیا ہے۔ کمپنی کی طرف سے 787طیارے دنیا کی 59ایئر لائنوں کو بیچے جاچکے ہیں۔ بوئنگ کے انجینئرز کی طرف سے اس مسئلے کی نشاندہی 23اپریل کو کی گئی تھی۔ اخبار نیویارک ٹائمز کے مطابق بوئنگ کا کہنا ہے کہ اس مسئلے کا پیش آنا تقریباً ناممکن ہے کیونکہ جہاز کے سسٹم کو مسلسل 248دن کے لیے آن رکھنا انتہائی خلاف معمول بات ہے۔ کمپنی کی طرف سے یہ بھی بتایا گیا ہے کہ مسئلے کی نشاندہی کسی حقیقی پرواز کے دوران نہیں بلکہ لیبارٹری سیمولیشن کے دوران کی گئی تھی۔

مزید پڑھیں :تارکین وطن کی کشتی ڈوبنے سے درجنوں افراد ہلاک

مزید : ڈیلی بائیٹس