دوسرے روز بھی مندا ،100 انڈیکس دو نفسیاتی حدوں سے گر گیا

دوسرے روز بھی مندا ،100 انڈیکس دو نفسیاتی حدوں سے گر گیا

کراچی (اکنامک رپورٹر)کراچی اسٹاک مارکیٹ مسلسل دوسرے روز بھی مندی کی زد میں رہی اور کے ایس ای100انڈیکس 33700پوائنٹس کی سطح سطح سے گر کر 33500کی سطح پر آگیا ،سرمائے کے حجم میں 44ارب سے زائد روپے کی کمی واقع ہوئی جبک دو روزہ مندی سے سرمایہ کاروں کو60ارب سے زائد روپے کا جھٹکا برداشت کرنا پڑا ۔کراچی اسٹاک مارکیٹ میں منگل کے روز بھی مندی کے اثرات غالب رہے ٹریڈنگ کے دوران انڈیکس کاروبار کے ابتدائی سطح سے زیادہ آگے نہ بڑھ سکا جبکہ مخصوص اسٹاکٹس میں فروخت کے رجحان نے تیزی کے اثرات کو زائل کرنے ہوئے مارکیٹ کو منفی زون میں دھکیل دیا اور دوران ٹریڈنگ انڈیکس 33700،33600،33500،33400پوائنٹس کی 4 بالائی حدیں گنوا بیٹھا اورانڈیکس33300پوائنٹس کی کم ترین سطح تک گر گیا تاہم کاروبار کے اختتام سے قبل بڑے سرمایہ کاروں کی جانب سے حصص کی خریداری اور نئی سرمایہ کاری کے باعث انڈیکس 33500پوائنٹس کی نفسیاتی حد پر بحال ہو گیا لیکن کاروباری سرگرمیوں میں گرواٹ کا رجحان دیکھا گیا ۔منگل کو کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای100انڈیکس میں189.89پوائنٹس کی کمی واقع ہوئی اور انڈیکس33723.53پوائنٹس سے کم ہو کر33533.64پوائنٹس پر بند ہوا اسی طرح 158.12پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای30انڈیکس 21553.13پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 23540.68پوائنٹس سے گھٹ کر23396.46پوائنٹس پر آگیا ۔مندی کے سبب مارکیٹ کے سرمایے میں 44ارب 84کروڑ87لاکھ30ہزار48 روپے کی کمی ہوئی جس سے مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 72کھرب89ارب36کروڑ12لاکھ 82ہزار174روپے سے کم ہو کر 72کھرب44ارب 51کروڑ 31 لاکھ 52 ہزار 126روپے ہو گیا ۔        کراچی اسٹاک مارکیٹ میں منگل کے روز17کروڑ26لاکھ49ہزار حصص کے سودے ہوئے اور ٹریڈنگ ویلیو10ارب روپے تک محدود رہی جبکہ پیر کے روز 20کروڑ60لاکھ84ہزار حصص کے سودے ہوئے تھے اورٹریڈنگ ویلیو14ارب روپے ریکارڈ کی گئی ۔کراچی اسٹاک مارکیٹ میں مجموعی طور پر352کمپنیوں کا کاروبار ہوا جن میں سے 104کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں اضافہ ،229میں کمی اور19کمپنیوں کے شیئرز کی قیمتوں میں استحکام دیکھا گیا ۔کاروبار کے لحاظ سے اینگرو فرٹیلائزر 2کروڑ24لاکھ ،کے الیکٹرک لمیٹڈ 1کروڑ86لاکھ ،بائیکو پیٹرولیم94لاکھ ،بینک آف پنجاب 86لاکھ65ہزار اور ڈی جی کے سیمنٹ 86لاکھ حصص کے سودوں سے سرفہرست رہے ۔قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے اعتبار سے کولگیٹ پامولیو کے بھاؤ میں 30روپے اور ایبٹ لیبارٹری کے بھاؤ میں21.33روپے کا اضافہ جبکہ رفحان میظ کے بھاؤ میں144روپے اور سیمنس پاکستان کے بھاؤ میں43روپے کی نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی ۔#

مزید : کامرس