گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہورمیں نامور صحافیوں کی یاد میں تعزیتی ریفرنس

گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہورمیں نامور صحافیوں کی یاد میں تعزیتی ریفرنس

 لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)گورنمنٹ کالج یونیورسٹی لاہورمیں نامور صحافیوں کی وفات کے بعد انکی یاد میں تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ریفرنس کی صدارت لاہور پریس کلب کے صدرارشد انصاری نے کی ،جبکہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر محمد خلیق الرحمان نے بھی ریفرنس میں شرکت کی۔تقریب میں معروف صحافی اسد ساہی،حامد جاوید،معین احمد،اختر حیات اور عثمان ملک کی صحافتی خدمات کو خراجِ تحسین پیش کیاگیا۔تقریب میں اسد عباس ساہی کے والد حسنین ساہی،بھائیوں عون عباس ، علی مسلم ساہی اور مختلف اخبارات سے تعلق رکھنے والے صحافیوں ،جی سی یو کے طلباء وطالبات اور ایجوکیشن رپورٹرز ایسوسی ایشن کے عہدیداران نے شرکت کی۔تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلرپروفیسر ڈاکٹر محمد خلیق الرحمان کا کہنا تھا کہ صحافی معاشرے کا آئینہ ہوتا ہے۔وہ عوام اور حکومت کے درمیان رابطے کا کام بھی کرتا ہے اور مختلف معاشرتی مسائل کو اجاگر کرتا ہے انہوں نے اسد عباس ساہی ،حامد جاوید اور دیگر مرحوم صحافیوں کی خدمات کو خراجِ تحسین پیش کیا۔صدر لاہور پریس کلب ارشد انصاری نے کہا کہ بچھر جانے والے صحافی ساتھیوں کی یاد میں تقریبات اچھی بات ہے،تاکہ صحافت کے میدان میں معاشرے کی خدمت کرنے والوں کی ستائش کی جا سکے۔    پریس کلب صحافیوں کی فلاح بہبود کے لیئے کام کرتا رہے گا۔کالم نگار عابد تہامی نے کہا کہ اسد عباس ساہی جیسے لوگ صحافت کا سرمایہ ہیں۔نامور صحافی چوہدری خالد قیوم نے بھی اسد عباس ساہی،حامد جاوید اور دیگر صحافیوں کی خدمات کو سراہتے ہوئے کہا کہ محنت کر کے نام بنانے والے صحافیوں کا کیرئیر مشعل راہ ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4