ایف بی آرکاروباری مقامات پر چھاپے نہیں مارے گا:صدر لاہورچیمبر

ایف بی آرکاروباری مقامات پر چھاپے نہیں مارے گا:صدر لاہورچیمبر

  

لاہور (کامرس رپورٹر) لاہور چیمبر کے مطالبے پر سینٹ کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس و ریونیو نے ایک مراسلے کے ذریعے یہ واضح کردیا ہے کہ چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریونیو یا متعلقہ ممبر کی اجازت کے بغیر کسی بھی ٹیکس دہندہ انڈسٹری، فیکٹری ، دیگر کاروباری مقامات پر چھاپے مارنااور تاجروں کو ہراساں کرنا قطعاً غیر قانونی ہے۔ یہ بات لاہور چیمبر کے صدر عبدالباسط نے لاہور چیمبر میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے بتائی۔ سینئر نائب صدر امجد علی جاوا اور نائب صدر ناصر حمید خان ، میاں زاہد جاوید اور محمد ہارون اروڑہ بھی اس موقع پر موجود تھے۔

عبدالباسط نے بتایا کہ اسلام آباد میں چیئرمین سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس و ریونیو سلیم مانڈوی والا سے ملاقات ہوئی جس میں انہیں ایف بی آر اہلکاروں کی جانب سے صوابدیدی اختیارات کے ناجائز استعمال اور کاروباری مقامات پر چھاپوں کی وجہ سے پیدا ہونے والے مسائل سے آگاہ کیا گیا، چیئرمین سٹینڈنگ کمیٹی نے فوری ایکشن لیتے ہوئے ایک مراسلہ جاری کیا جس میں تاجروں کو بھی یہ ہدایت کی گئی ہے کہ اگر ایف بی آر اہلکار چیئرمین ایف بی آر یا متعلقہ ممبر کی اجازت کے بغیر اْن کے خلاف کوئی ایکشن لیتے ہیں تو وہ سینٹ کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس و ریونیو اور چیئرمین ایف بی آر کو اطلاع دیں۔ لاہور چیمبر کے صدر نے کہا کہ سینٹ کی سٹینڈنگ کمیٹی کی جانب سے ایف بی آر چیئرمین اور متعلقہ ممبر کی اجازت کے بغیر صوابدیدی اختیارات کے ناجائز استعمال اور کاروباری مقامات پر چھاپے مارنے پر پابندی کاروباری برادری کے اصولی موقف کی حمایت اور حق کی فتح ہے۔ انہوں نے کہا کہ چھاپوں اور تاجروں کو ہراساں کرنے کے عمل نے کاروباری ماحول کو خراب کیا جبکہ کاروباروں کی ساکھ بھی خراب ہوئی لیکن اب صورتحال بہت بہتر ہوگی۔ تاجر سینٹ کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس اینڈ ریونیو کے چیئرمین سلیم مانڈوی والا کے مشکور ہیں جنہوں نے زمینی حقائق کو مدنظر رکھتے ہوئے تاجروں کے حق میں فوری قدم اٹھایااور یہ دیرینہ مسئلہ حل کیا۔ انہوں نے کہا کہ اگلا مرحلے میں بینک اکاؤنٹس تک رسائی ،آڈٹ شدہ فرموں کے دوبارہ آڈٹ اور پنجاب انفراسٹرکچر ڈویلپمنٹ سیس جیسے مسائل پر جدوجہد کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ تاجروں کے بینک اکاؤنٹس تک رسائی ختم ہونی چاہیے جبکہ آڈٹ شدہ فرم کا کم از کم پانچ سال تک دوبارہ آڈٹ نہ کیا جائے۔ لاہور چیمبر کے سینئر نائب صدر امجد علی جاوا اور نائب صدر محمد ناصر حمید خان نے کہا کہ ٹیکس دہندگان کو عزت و احترام دئیے بغیر مزید لوگوں کو ٹیکس نیٹ میں آنے کی ترغیب دیناممکن نہیں ہے۔ سینٹ کی سٹینڈنگ کمیٹی برائے فنانس و ریونیو نے درست سمت میں قدم اٹھاکر تاجروں کا اعتماد بحال کیا ہے جس کے بہترین اثرات ٹیکس وصولی اور ٹیکس نیٹ پر بھی مرتب ہونگے۔

مزید :

کامرس -