بونیر میں طوطالئی بازار کے دکانداروں کا پولیس کیخلاف مظاہرہ

بونیر میں طوطالئی بازار کے دکانداروں کا پولیس کیخلاف مظاہرہ

  

بونیر (ڈسٹرکٹ رپورٹر)تھانہ طوطالئی پولیس کی جانب سے منشیات فروشوں کے خلاف کاروائی کرنے اور گھر میں منشیات سمیت کو ئی غیر قانونی چیز نہ ملنے کے خلاف عوام نے طوطالئی بازار میں پولیس کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا ۔مظاہرین کی قیادت اے این پی کے صدر محمد کریم بابک اور سابق تحصیل ناظم یو سف علی نے کی ۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ پولیس نے اشفاق احمد اور شیر علی کے گھر میں گھس کر چادر چار دیواری کی تقدس کو پامال کیا ۔مظاہرین نے کہا کہ چھاپہ مارنے والے پولیس اہلکاروں کے خلاف کاروائی کی جائے ۔اگر دو دن کے اندر اندر انکے خلاف کاروائی نہ کی گئی تو پیر کے روز ہم دوبارہ احتجاج کرنے پر مجبور ہوں گے ۔تھانہ طوطالئی کے ایس ایچ او محمد یونس کا کہنا تھا کہ عوامی شکایت اور ڈی پی او بونیر کے حکم پر ہم نے منشیات فروشوں کے خلااف کاروائی شروع کی ۔اور طوطالئی کے سول جج سے باقاعدہ سرچ وارنٹ حاصل کی تھی ۔چھاپہ کے دوران پولیس نے میرزا محمد کے گھر سے تین سو گرام چرس ،پستول دس گرام افیون ۔فضل اکرم کے گھر سے تیرہ عد کارتوس برامد کئے ۔جبکہ اشفاق احمد ولد زالی خان اور شیر علی ولد نور محمد ساکن طوطالئی کے گھروں پر چھاپے مارے مگر انکے گھروں سے کوئی چیز برامد نہ ہوئی جس پر گنتی کے چند افراد جمع ہوکر ہمارے خلاف مظاہرہ کیا ۔انہوں نے کہا کہ علاقہ میں کسی کو غیر قانونی دھندے کی اجازت نہیں ہو گی ۔ہم ائندہ بھی منشیات فروشوں کے خلاف کاروائی جاری رکھیں گے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -