شہباز سینئر نے ہاکی فیڈریشن کے صدر کے خلاف علم بغاوت بلند کردیا

شہباز سینئر نے ہاکی فیڈریشن کے صدر کے خلاف علم بغاوت بلند کردیا
 شہباز سینئر نے ہاکی فیڈریشن کے صدر کے خلاف علم بغاوت بلند کردیا

  

کراچی ( ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سابق سیکریٹری شہباز احمد سینئر نے فیڈریشن کے صدر کے خلاف علم بغاوت بلند کردیا۔

گزشتہ روز پاکستان ہاکی فیدریشن کے صدر خالد سجاد کھوکھر نے ایک بیان میں شہباز احمد  سینئر کا استعفیٰ قبول کرتے ہوئے اولمپیئن آصف باجوہ کو نیا سیکریٹری نامزد کرنے کا اعلان کیا تھا۔ نئے سیکریٹری آصف باجوہ کی تعیناتی کو ابھی چند گھنٹے بھی نہ گزرے تھے کہ شہباز احمد سینئر نے پنڈوراباکس کھول دیا۔ انہوں نے کہا کہ زبردستی برطرف کیا گیا ہے، تین ماہ قبل استعفی دیا تھا تو صدر نے قبول نہیں کیا تھا لیکن اب اچانک استعفیٰ دیے بغیر ہی میرا استعفی کیسے قبول کرلیا گیا؟۔ شہباز سینئر نے  کہا ہے کہ صدر ہاکی فیڈریشن کو کوئی استعفیٰ نہیں دیا، ایسے بیانات چلنا یا چلوانا غیراخلاقی عمل ہے، میرے لئے سیکرٹری پی ایچ ایف کا عہدہ کوئی بڑا نہیں، میں نے دنیا بھر میں پاکستان کے لئے عزت کمائی جس کے بعد مجھے عہدے کا لالچ نہیں لیکن مجھے افسوس ہے کہ میری لاعلمی میں مجھ سے منسوب کرکے بیانات جاری کرائے گئے جو کہ غیر اخلاقی عمل ہے۔

دوسری جانب ہاکی فیڈریشن کی کانگریس کی منظوری کے بغیر ہی صدر خالد سجاد کھوکھر کی جانب سے آصف باجوہ کو نیا سیکرٹری نامزد کرنے پر اختیارات کی جنگ شروع ہوگئی ہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -کراچی -