این آراو لینے اورکہنے والوںپرایک ہزاربارلعنت ،راناثناءاللہ

این آراو لینے اورکہنے والوںپرایک ہزاربارلعنت ،راناثناءاللہ

  

فیصل آباد(آن لائن) مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدرممبر قومی اسمبلی سابق وزیر قانون پنجاب راناثنا ءاللہ خاںنے کہاہے کہ عمران خان صدارتی نظام میںخودمصروف تھے انگورکھٹے ہونے پرانہوںنے پسپائی کی ہے۔ وہ بغض اورانتقام میںاحمق جبکہ ذہنی دباﺅکانہیںذہنی عارضہ کاشکارہیںجبکہ ڈاکٹرعارف علوی انہیںصرف ذہنی دباﺅ کاشکار قراردے رہے ہیں۔مسلم لیگی قیادت کی خاموشی بہت جلدختم ہوجائےگی۔ این آراو لینے اورکہنے والوںپرایک ہزاربارلعنت،حکومت ملک کونقصان پہنچانے کے درپے ہے اپوزیشن کوبجٹ کے بعدمیدان عمل میںآناچاہئے تاکہ ملک کسی حادثہ سے محفوظ رہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے فیصل آباد میںمیڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کیا ۔انہوںنے کہاکہ مسلم لیگ ن میثاق معیشت اورجمہوریت کےلئے تیارتھی۔ جمہوریت کی بقا کےلئے حکومت کووقت دیناچاہتی تھی مگرحکومت نے ملک کوسنبھالنے والوںکوغائب کردیا ہے۔ حکومت معیشت کنٹرول کرنے میںناکام ہوچکی ہے غریب عوام کے لئے 2وقت کی روٹی بھی ممکن نہیںرہی اوراب وقت بھی گزرچکا ہے۔آئی ایم ایف نے ایسٹ انڈیاکمپنی کی طرح قبضہ کرلیا ہے وزیرخزانہ،گورنرسٹیٹ بنک اورچیئرمین ایف بی آراس کے ملازم ہیںانہیں پاکستانی عوام سے کوئی ہمدردی نہیں ان کے فیصلے عوام کے خلاف ہوںگے۔انہوںنے کہاکہ مسلم لیگ ن کی تنظیمیںبرقراررہیںگی تاہم فیصل آبادسمیت صوبہ بھرمیں غیرمتحرک اورعام انتخابات میں کردارادانہ کرنے والوںکوتبدیل کیا جائے گا عیدکے بعد9ڈویژن میں تنظیم نوکی جائے گی ۔

راناثناءاللہ

مزید :

صفحہ آخر -