افغانستان ،پولیس ہیڈکوارٹر پر خود کش حملہ ،13اہلکار ہلاک 54زخمی ،8حملہ آور بھی مارے گئے

  افغانستان ،پولیس ہیڈکوارٹر پر خود کش حملہ ،13اہلکار ہلاک 54زخمی ،8حملہ آور ...

  

کابل(مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی) افغانستان کے شمالی شہر پل خمری میں قائم پولیس ہیڈکوارٹر پر خود کش حملے کے نتیجے میں 13 ا ہلکار ہلاک جبکہ 55 زخمی ہو گئے، ان میں شہریوں کی تعداد بھی شامل ہے۔افغان وزارت داخلہ کے حکام کے مطابق حملے میں 13 اہلکار جان سے ہاتھ دھو بیٹھے، 55 افراد زخمی بھی ہوئے جن میں متعدد شہری بھی شامل ہیں۔افغان حکام کا کہنا ہے کہ حملے میں ملوث تمام 8 دہشت گردوں کو مار دیا گیا۔غیر ملکی خبر رساں ادارے رائٹرز کی رپورٹ کے مطابق طالبان نے ایک جاری بیان میں کہا کہ ان کے جنگجوو¿ں نے پل خمری کے علاقے میں قائم پولیس ہیڈکوارٹر کو نشانہ بنایا۔طالبان کے ترجمان ذبیح اللہ مجاہد کا کہنا ہے کہ خود کش بمبار نے باردو سے بھری ہموی بکتر بند گاڑی کو ہیڈکوارٹر کے قریب دھماکے سے اڑایا جبکہ دیگر مسلح جنگجوو¿ں نے سیکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی اور کمپاو¿نڈ میں داخل ہوئے ۔رپورٹ کے مطابق دھماکے کے بعد فضا میں دھوئیں کے سیاہ بادل دیکھے گئے ۔افغان وزارت دفاع نے دعویٰ کیا ہے کہ غزنی میں دو طالبان رہنماﺅں سمیت کم ازکم 52انتہا پسند ہلاک ہو گئے۔فوجی کمانڈوز اور افغان جنگی طیاروں نے طالبان کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا جس میں طالبان کے مقامی رہنما ابو خالد اور کماندن سرحدی سمیت 52انتہا پسند ہلاک ہوگئے۔سرکاری ذرائع نے ان ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے تاہم طالبان نے اس پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔

 خود کش حملہ

مزید :

صفحہ آخر -