بار بر کہہ چکا (ن) لیگ کا حصہ نہیں، اسمبلی میں حلف اٹھایا تو منافقت ہو گی: چودھری نثار

بار بر کہہ چکا (ن) لیگ کا حصہ نہیں، اسمبلی میں حلف اٹھایا تو منافقت ہو گی: ...

  

واہ کینٹ(آن لائن) مسلم لیگ (ن) کے سابق رہنما چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ اکتوبر میں اس قدر مہنگائی آئے گی کہ قوم چیخ اٹھے گی، کیسے صوبائی اسمبلی کا حلف اٹھا لوں، اگر میں نے پنجاب اسمبلی کا حلف اٹھایا تو یہ منافقت ہو گی، آج کل پاکستان میں سیاست مصر کی منڈی کا منظر پیش کر رہی ہے، معیشت سمیت دیگر حوالوں سے پاکستان کے گرد گھیرا تنگ کیا جا رہا ہے، بار بار کہہ چکا ہوں کہ میں ن لیگ کا حصہ نہیں ہوں۔ واہ کینٹ میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے چوہدری نثار نے کہا کہ آج کل پاکستان میں سیاست مصر کی منڈی کا منظر پیش کر رہی ہے، میں نے مسلم لیگ (ن) میں ایک طویل وقت گزارا ہے، بار بار کہہ چکا ہوں کہ اب مسلم لیگ (ن) کا حصہ نہیں ہوں، میں عزت کی خاطر سیاست کرتا ہوں اقتدار کے لیے نہیں۔ حکومت نے نیب کو متنازع بنا دیا ہے، عمران خان اور حکومت اپنا کام کرے اور اداروں کو کام کرنا دینا چاہیے۔ چوہدری نثار نے کہا کہ آئی ایم ایف خودمختار ادارہ نہیں ہے، آئی ایم ایف سیاسی ادارہ ہے جو طاقتور کے تحت چلتا ہے، موجودہ حکومت آئی ایم ایف سے قرض نہ لینے کی شرط میں اقتدار میں آئی لیکن اس نے ریکارڈ قرض لئے، مسلم لیگ (ن) کی حکومت میں آئی ایم ایف کی کئی شرائط نہیں مانی گئی تھیں، حکمرانوں کو احساس ہی نہیں ہے کہ قرضوں سے معشیت پر کتنا اثر پڑے گا، موجودہ حکومت کے مطابق سابق حکومتوں نے بہت قرض لیا، اس نظام کو تبدیل کرنے کی ضرورت ہے جس میں ہمارا قرض تیزی سے بڑھ رہا ہے۔سابق وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان کے ارد گرد گھیرا تنگ ہورہا ہے، معیشت سمیت دیگر حوالوں سے بھی پاکستان کی گرفت کی جارہی ہے، ہر ایک کو چور اور ڈاکو کہنے سے کام نہیں چلتا، جنگیں قوم کو اعتماد میں لے کر لڑی جاتی ہیں، ہم قومی اتفاق سے ہی تمام بیرونی مشکلات کا سامنا کر سکتے ہیں۔

نثار علی 

مزید :

صفحہ اول -