قبائلی اضلاع کے عوام آزمازئش کی گھڑی سے گزر رہے ہیں: علی محمد خان 

قبائلی اضلاع کے عوام آزمازئش کی گھڑی سے گزر رہے ہیں: علی محمد خان 

  

مہمند (نمائندہ پاکستان) قبائلی اضلاع کے عوام موجودہ وقت میں ایک بار پھر کھڑی آزمائش سے گزر رہے ہیں۔ وزیر اعظم عمران خان ان کی محرومیوں کو دور کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات اُٹھا رہے ہیں۔ مگر بعض عناصر بیرونی اشاروں پر پاکستان کے جھنڈے اور پاک فوج کی بے عزتی کی کوشش کر رہے ہیں۔ اب قبائلی عوام بیدار ہو چکے ہیں۔ کسی سازش کا حصہ ہرگز نہیں بنیں گے۔ ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیر مملکت پارلیمانی اُمور علی محمد خان نے دورباخیل حلیمزئی کے مقام پر ایک بڑے عوامی جلسے سے خطاب کے دوران کیا۔ جلسے سے ممبر قومی اسمبلی ساجد خان مہمند اور دوسرے پارٹی رہنماﺅں سجاد خان مہمند، تاجبر خان، ڈاکٹر محمد صادق، محمد سلیم، امیر اللہ جنیدی، قاری رحیم شاہ، نجیب اللہ اور حاجی کمین اللہ نے بھی خطاب کیا۔ علی محمد خان نے کہا کہ موجودہ حکومت نے پشتون قوم کی صحیح نمائندگی کرتے ہوئے خیبر پختونخواہ سے منتخب اُمیدواروں کو پارلیمینٹ میں اہم عہدے دیئے ہیں۔ مگر بعض سیاسی پارٹیاں اور عناصر پشتونوں میں مایوسی اور نا اُمیدی بیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔ ان لوگوں کا مقصد پاکستان میں انتشار پھیلانا ہے۔ قبائلی علاقوں میں پاک فوج اور قبائلی عوام نے بے پناہ قربانیوں سے امن قائم کر کے موجودہ حکومت نے ترقی کا نیا سفر شروع کیا ہے۔ جب قبائلی علاقوں میں ڈرون حملے ہوتے تھے اور بے گناہ لوگ مر رہے تھے تو PTM کہا تھا۔ وہ لوگ جن کو بیرونی قوتیں اُکسا رہے ہیں اور قبائلی علاقوں میں ترقی کے اس سفر کو روکنا چاہتے ہیں۔ علی محمد خان نے کہا کہ ماضی کے حکمرانوں نے ملک کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ لیا ہے۔ اب حکومت محفوظ ہاتھوں میں ہے۔ عمران خان کا قبائلی علاقوں کا حالیہ دوروں کا سلسلہ قبائلی عوامی مشکلات معلوم کرنے اور ان کے زخموں پر مرہم پٹی لگانا ہے۔ انہوں نے قبائلی عوام پر زور دیا کہ صوبائی الیکشن میں تحریک انصاف کو کامیاب بنائے۔ جلسہ سے ممبر قومی اسمبلی ساجد خان نے کہا کہ عمران خان نے مہمند ڈیم افتتاح کے دوران ساڑھے چار ارب فنڈ خرچ کرنے کا اعلان کیا ہے۔ اور این ایف سی ایوارڈ میں تین فیصد حصہ جلد مل جائیگا۔ 

مزید :

صفحہ اول -