رمضان میں ریلیف کی بجائے مہنگائی کا بم گرادیا گیا : اکرم درانی 

رمضان میں ریلیف کی بجائے مہنگائی کا بم گرادیا گیا : اکرم درانی 

  

پشاور(سٹی رپورٹر)اپوزیشن لیڈر خیبرپختونخوا اسمبلی اکرم خان درانی نے تبدیلی سرکارپر تنقید کر تے ہو ئے کہاہے کہ تبدیلی سر کار ملک کے غر یب عوا م پر ہر ہ ماہ مہنگا ئی کے بم گرا د یتے ہیں ماہ ر مضان شروع ہوتے ہوئے عوام ر یلیف کے بجا ئے پیٹرول کی قیمتوں میں اضافے کا سرپرائزدید یا جو کہ ایک بہت بڑی تبدیلی ہے کہہ رہی تھی کہ عوام کو مثالی ریلیف دینگے اتنی مہنگائی اور بے روزگاری پچھلے ادوار میں بھی نہیں دیکھاعوام نے تبدیلی سر کار کا مکروہ چہر ہ دیکھ لیا اب ان کے پاس عوام کو ر یلیف د ینے کےلئے کو ئی پالیسی نہیں ہے یہودی لا بی حکمرا ن نے سوچی سمجھی سازش کے تحت مولانا فضل الرحمان کو سکیورٹی وا پس لے لی گئی جس کوسکیورٹی خطرہ ہے ان پر کئی بار خودکش اور ٹارگٹ حملے ہوئے ہیںمولانا فضل الر حمن سے سکیورٹی واپس لینے پر انتہائی تشویش ہے مولانا سے سکیورٹی لینا دہشتگردوں کے سہولت کاری کے مترادف ہے اگر مولانا فضل الرحمان کو کچھ بھی ہوا تو ہمارا ایف آئی آر عمران خان ،وزیر داخلہ اور وزیر اعلیٰ محمود خان پر کاٹی جا ئیگی ۔گزشتہ روز پشاور پر یس کلب میںایم این اے عبد الشکور ،غلام علی ، عبدالجلیل ،آصف اقبال داودزئی،مولانا امان اللہ حقانی اور دیگر ساتھیوں کے ہمرا ہ پر یس کانفر نس کر تے ہو ئے اکر م خان درانی کا کہنا تھا کہ جمعیت علما ئے اسلام اصل اپوزیشن کا کردار ادا کررہی ہے جبکہ باقی سیاسی جماعتیں صحیح معنوںمیں اپوزیشن کا کردار ادا نہیں کررہے ہیں۔انہوں نے کہاکہ یو ٹر ن سر کار الیکشن سے قبل کنٹینر اور عوامی جلسوں میں غر یب عوا م کے ساتھ جو وعدے کئے وہ سب ہوا کا جھونکا ثابت ہوا اور اب حکومت عوام کو ر یلیف کے بجا ئے مہنگا ئی کے سونامی میں لے ڈوبا جا ر ہا ہے جس سے واضح پتہ چلا کہ حکومت کے پا س کو ئی مثبت پا لیسی نہیں ہے جس سے عوام کو ر یلیف د یا جا ئے ۔انہوں نے کہاکہ گزشتہ روزمہمند ڈیم کی افتتاح کے موقع پر مو لا نا صاحب سکیورٹی واپس لینے کا فیصلہ کیا گیا ہم حکومت کے اس اوچھے ہتھکنڈوں سےڈرنے والے نہیں جمعیت علما ئے اسلام اپنے قائد کو خود سکیورٹی دیتے اور ان پر لا کھوں کار کنوں جانثا ر ہیں ان پر جا ن د ینے کےلئے ہر وقت کارکناں الاٹ ہیں ۔انہوں نے کہاکہ چیف جسٹس آف پاکستان نے سیا سی لیڈروں کو سکیورٹی د ینے کے احکامات جا ر ی کر دیئے تھے لیکن اب عمران خان یہودی لا بی مولانا کو ذہنی اذیت د ینے کےلئے ناکام کوشش کررہی ہے جبکہ عام انتخابات میں مجھ پر بھی حملے ہوئے۔انہوں نے کہاکہ ملین مارچ اور ختم نبوت مارچ سے حکومت خوفزدہ ہے کہ مولانا کے جلسے میں کیسے اتنے لوگ آتے ہیںجسکی وجہ سے ان کے پیٹ میںمروڑ اٹھ جا تے ہیں اور مولانا کی مقبو لیت ان سے ہضم نہیں ہو ر ہی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ ہم نے حکومت کو اب گھیر لیا ہے اور اب وہ کچھ نہیں کر سکتے ان کے وزیر اعلیٰ میں ہمت نہیں ہے کہ وہ اسمبلی میں اپوزیشن کا سامنے کر سکے انہوں نے کہاکہ ہم سکیورٹی کےلئے درخواست دینے والے لوگ نہیں کیوں اداروں کو خود نظر نہیں آرہاکہ مولانا کو سکیورٹی خطر ہ لا حق ہے جبکہ جمعیت علما ئے اسلام عید کے بعد اسلام آ باد میں حکومت کو ٹف ٹا ئم د ینگے تا ہم کنٹینر اور کھانے د ینے کی بات کر نے والے یو ٹر ن خان نے اب ان سے بھی یو ٹر ن لیا اور اپوزیشن سے دوسال حکومت چلنے کی بھیک مانگ ر ہی ہے۔

مزید :

صفحہ اول -