عبدالرزاق نے بھی ڈپارٹمنٹل کرکٹ بند کرنے کیخلاف آوازبلندکردی

عبدالرزاق نے بھی ڈپارٹمنٹل کرکٹ بند کرنے کیخلاف آوازبلندکردی

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر) پاکستان کے مایہ ناز آل راؤنڈرعبدالرزاق نے بھی ڈیپارٹمنٹل کرکٹ جاری رکھنے کے حق میں آواز بلند کردی۔قومی آل راؤنڈرنے میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ کرکٹ کا سٹرکچر کیا ہونا چاہیے اس کا فیصلہ تو بہر حال پی سی بی نے کرناہے لیکن میری ذاتی رائے میں ڈیپاڑٹمنٹل کرکٹ کی وجہ سے ہی بہترین کرکٹ ہونے کے ساتھ اچھے کرکٹرز بھی سامنے آرہے ہیں۔اس کو ہرگز بند نہیں کرناچاہیے۔ ہمارے زیادہ ترکرکٹرزکو ڈیپارٹمنٹس نے روزگار دے رکھا ہے اگر محکموں کی ٹیمیں ختم ہوجائیں گی توپھر ہمارے کرکٹرز کو بھی بہت نقصان ہوگا،کوئی بھی فیصلہ کرنے سے پہلے اس پہلو کو بھی سامنے رکھنا چاہیے۔عبدالرزاق کا کہنا تھا کہ پی سی بی ہرسال ڈومیسٹک سسٹم تبدیل کرتا ہے اور اس کو کتنا مزید بدلیں گے۔ ڈیپارٹمنٹ کرکٹ بند ہونے سے ہماری کرکٹ بہت نیچے چلی جائے گی۔ انہوں نے کہاکہ جاوید میاں داد، عبدالقادر سمیت جتنے بھی کرکٹرز اس پر بات کررہے ہیں، اس کی وجہ صرف یہ ہے کہ وہ صرف یہ احساس دلاناچاہتے ہیں کہ ڈیپارٹمنٹ کرکٹ ہمارے ملک کیلئے کتنی اہم ہے، ہم خود محکموں کی کرکٹ سے یہاں تک پہنچے ہیں۔آل راؤنڈر نے کہا کہ پی سی بی اور وزیر اعظم عمران خان کو اس حوالے سے جلد بازی نہیں کرنی چاہیے بلکہ سوچنا چاہیے کہ ایسا کرنے سے کرکٹ پر کیا اثرات مرتب ہوں گے۔ ہمارے ملک کی آبادی اب 22 کروڑ تک پہنچ چکی ہے، اس میں صرف 6ٹیمیں بنانا بہت مشکل ہے، آسٹریلیا کی آبادی ہم سے بہت کم ہے، وہاں کے نظام میں ایسا ہوسکتاہے۔

میری راے میں ڈیپارٹمنٹ کرکٹ کو کسی صورت بند نہیں ہونا چاہیے، بلکہ محکموں کی کرکٹ کو بڑھانے پرتوجہ دینے کی ضرورت ہے، انہیں انڈرنائن ٹین اور انڈر سکسٹین ٹیمیں بھی بنانے کی ہدایت کرنی چاہیے۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -