نومسلم لڑکی عائشہ بی بی کی عمر کے تعین کیلئے نادرا سرٹیفکیٹ پیش کرنیکاحکم

نومسلم لڑکی عائشہ بی بی کی عمر کے تعین کیلئے نادرا سرٹیفکیٹ پیش کرنیکاحکم

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس شہرام سرور چودھری نے پسند کی شادی کرنے والی نومسلم لڑکی عائشہ بی بی کی عمر کے تعین کیلئے نادرا کا سرٹیفکیٹ پیش کرنے کاحکم دے دیا۔عدالت نے لڑکی کودارلامان بھجوا رکھا ہے،اس کے شوہر محمد حسان نے اپنی درخواست میں موقف اختیار کیا کہ ننکانہ صاحب کے بھگوان سنگھ کی بیٹی نے اسلام قبول کرکے اس کے ساتھ شادی کی اور اپنا نام جگجیت کور سے تبدیل کرکے عائشہ رکھا،دونوں نے 28 اگست 2019ء کوشادی کی۔دونوں عاقل و بالغ ہیں،لڑکی کو درخواست گزار کے ساتھ جانے کی اجازت دی جائے،جس پر فاضل جج نے ہدایت کی کہ نادرا کی جانب سے جاری کیا گیا سرٹیفکیٹ عدالت میں پیش کیا جائے۔عدالت نے محمد حسان کا نادرا کی طرف سے جاری کیا گیا برتھ سرٹیفکیٹ بھی آئندہ تاریخ سماعت پر پیش کرنے کی ہدایت کی ہے،عدالت نے اس کیس کے فیصلے تک عائشہ کو دارالامان بھجوا رکھاہے۔کیس کی مزید سماعت22مئی کو ہوگی۔

عمر تعین

مزید :

صفحہ آخر -