پنجاب میں کوڑا کرکٹ سے 150میگاواٹ بجلی منصوبہ جلد مکمل کرینگے: عثمان بزدار

    پنجاب میں کوڑا کرکٹ سے 150میگاواٹ بجلی منصوبہ جلد مکمل کرینگے: عثمان بزدار

  

لاہور(جنرل رپورٹر)وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے کہا ہے کہ صوبے میں کوڑا کرکٹ سے 150 میگاواٹ بجلی کی تیاری کے منصوبے کو جلد از جلد پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے،جن علاقوں میں بجلی نہیں وہاں سکولوں میں ترجیحی بنیادوں پر سولر سسٹم لگائے جائیں، قبائلی علاقوں کیلئے متبادل توانائی کے طورپر سولرٹیکنالوجی کو فروغ دیا جاے گا جبکہ شجرکاری کے فروغ اوردرختوں کو بچانے کیلئے سولر ٹیکنالوجی بہترین آپشن ہے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے اعلی سطحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اجلاس میں انرجی سیکٹرکے جاری اورزیر تکمیل منصوبوں کا بغورجائزہ لیکر اہم فیصلے کیے گئے۔اجلاس میں پنجاب میں 50سے 100گھروں کیلئے سولر سسٹم پراجیکٹ لانے کی اصولی منظوری دے دی گئی جبکہ پراونشل گرڈسٹیشن قائم کر کے صنعتوں کوبراہ راست بجلی کی فراہمی کے پراجیکٹ تیارکرنے کی ہدایت کی گئی۔وزیراعلیٰ نے کالا شاہ کاکومیں سولر وال پراجیکٹ کو اپ گریڈ کرنے کی بھی منظوری دے دی۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے ہدایت کی کہ بہاولپور میں سینٹر آف ری نیوایبل سولر انرجی ٹریننگ سینٹر اور ملتان میں سولر سینٹر آف ایکسی لینس فار سولر ٹیسٹنگ اینڈ ٹریننگ قائم ہوگا۔ہر ڈویژنل ہیڈکوارٹر میں سٹریٹ لائٹس،واسا،نکاسی و فراہمی آب کے منصوبوں کو شمسی توانائی پر منتقل کیا جائیگا۔عثمان بزدارنے کہا کہ بجلی پیدا کرنے والے یونٹس کو خسارے سے نکال کر منافع میں لانا چاہتے ہیں۔بجلی بچانے کیلئے سٹینڈرڈبلڈنگ کوڈپر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے۔سرکاری عمارتوں کے بجلی کے بلوں میں کمی لاکر بچت کی جائے۔ہائیڈرو پاور پلانٹس میں اضافی جگہ پر سولر سسٹم لگائے جائیں گے۔ابتدائی طورپر تین گاؤں میں بائیو اورسولرتوانائی پر مشتمل ہائیڈور پاور سسٹم لگائے جائیں گے۔دریں اثناء وزیراعلیٰ پنجاب نے سول سیکرٹریٹ دربار ہال میں پریزن مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم کے نفاذ کا افتتاح کیا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی زیر صدارت خصوصی اجلاس میں بتایا گیا کہ پریزن مینجمنٹ انفارمیشن سسٹم کے ذریعے قیدیوں،سٹاف،انتظامی اوردیگر امور کی ڈیجیٹل مانیٹرنگ کی جاسکے گی۔وزیراعلیٰ عثمان بزدارنے پنجاب کی تمام جیلوں میں پی سی او قائم کرنے کی منظوری دے دی۔اجلاس میں پنجاب کی جیلوں میں مزید 10ہزار قیدیوں کی گنجائش بڑھانے کیلئے مزید تعمیرات کا فیصلہ کیاگیا۔وزیراعلیٰ نے جیلوں میں نئے واش روم بنانے،لانڈری سسٹم بھی اپ گریڈ اورجیل سٹاف کی پوسٹ اپ گریڈیشن کی اصولی منظوری د ی گئی۔اجلاس میں فیصلہ کیاگیاکہ ضرورت کے مطابق ڈاکٹر اورطبی عملہ بڑھانے جائے گا اورجیل خانہ جات کیلئے ڈویلپمنٹ ڈائریکٹوریٹ بھی قائم کیا جائے گا۔وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ پورے پنجاب کی جیلوں میں ایئر کولر اورواٹر کولر بھی لگائے جائیں گے۔ایڈیشنل چیف سیکرٹری داخلہ مومن علی آغانے بریفنگ دی۔بعدازاں وزیراعلیٰ عثمان بزدارکی زیرصدارت سول سیکرٹریٹ میں اجلاس منعقد ہوا،جس میں ہوم قرنطینہ کا طریقہ کار اورایس او پیز طے کرنے پر غور کیاگیا۔ وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے ایکسپو سینٹرفیلڈ ہسپتال سمیت دیگر قرنطینہ مراکز میں کینٹین بنانے کی ہدایت دیں،قرنطینہ کینٹین کے عملے کیلئے طبی گاؤن،ماسک اورحفاظتی سامان کا استعمال ضروری قراردیاگیاہے۔صوبائی سیکرٹری سپیشلائزڈہیلتھ کیئراینڈ میڈیکل ایجوکیشن نے وزیراعلیٰ کو ہوم قرنطینہ کے مجوزہ ایس او پیز سے آگا ہ کیا۔وزیراعلیٰ نے متعلقہ اضلاع میں بھیجے جانیوالے کورونا مریضوں کی آمدورفت کیلئے فول پروف طریقہ کار اپنانے کی ہدایت کی ہے۔صوبائی وزیر صحت ڈاکٹر یاسمین راشد نے وزیراعلیٰ کو ایکسپو سینٹر قرنطینہ مرکز سے متعلق رپورٹ پیش کی۔علاوہ ازیں پنجاب حکومت نے لاک ڈاؤن کے باعث مالی مشکلات کا شکارمستحق فنکاروں کی مالی معاونت کیلئے مالی امداد کے پیکیج کی منظوری دے دی ہے۔وزیر اعلی عثمان بزدار کی ہدایت پر صوبائی محکمہ اطلاعات و ثقافت نے مستحق فنکاروں کیلئے مالی امداد کا پیکیج تیار کر لیا۔وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ مستحق فنکاروں کو 15 سے 20 ہزار روپے تک مالی امداد دیں گے،پنجاب حکومت 3ہزار فنکاروں کی مالی معاونت کرے گی۔

سردارعثمان بزدار

مزید :

صفحہ اول -