رحیم یارخان: چورکا بزرگ پر تشدد، پولیس کی انٹری، ملزم ڈیل کے بعد آزاد، متاثرین کا احتجاج

رحیم یارخان: چورکا بزرگ پر تشدد، پولیس کی انٹری، ملزم ڈیل کے بعد آزاد، ...

  

رحیم یار خان (بیورورپورٹ)رات کے اندھیرے میں چورنے ساٹھ سالہ بزرگ کو تشددکانشانہ بنا ڈالا۔ تفصیل کے مطابق موضع پلوشاہ کے رہائشی عباس شاہ اور علی شاہ نے احتجاج کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہ اجمل (بقیہ نمبر47صفحہ6پر)

چاچڑ شراب کے نشے میں رات کے اندھیرے میں ہمارے گھر گھس آیا کے شور شرابے سے گھر کے مالک عباس شاہ کی آنکھ کھل گئی، اجمل نامی چور بکریوں کے ساتھ چھپا ہوا دیکھا تو عباس شاہ نے چور کو پکڑ لیا۔عباس شاہ کا کہنا ہے کہ جب ہم نے رات کو اجمل چاچڑ کو پکڑا تو اجمل نے بری طرح تشدد کرنا شروع کر دیا واویلا پر بستی کے اور لوگ بھی جاگ گئے اور پولیس تھانہ آباد پور کواطلاع دے دی۔ پولیس نے اجملکو چھوڑ دیا، اگلے دن تھانے سے پتہ کیا تو الٹا ہمیں پولیس سنگین نتائج کی دھمکیاں موصول ہوئیں جب پولیس تھانہ آباد پور کو کہا کہ ہم ڈی پی او کے پاس جا رہے ہیں تو انہوں نے فرضی کارروائی کر کے ہمیں مطمئن کر دیا اور آٹھ روزگزرجانے کے باوجود ملزم اجمل کو گرفتار نہیں کیا گیا، الٹا پولیس اور ملزم ہمیں سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں عباس شاہ اور علی شاہ نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ تھانہ آباد پور پولیس کو ملزم اجمل کی گرفتاری کے لئے سخت احکامات جاری کئے جائیں۔اس سلسلہ میں جب پولیس تھانہ آباد پورکا موقف لیا گیا تو پولیس نے کہا کہ ملزم ضمانت پر ہے تمام تفتیش میرٹ پر ہو گی۔

احتجاج

مزید :

ملتان صفحہ آخر -