ملتان:ناجائز منافع خوروں کیخلاف کریک ڈاؤن،18گراں فروش گرفتار

ملتان:ناجائز منافع خوروں کیخلاف کریک ڈاؤن،18گراں فروش گرفتار

  

ملتان (نیوز رپورٹر) ضلعی انتظامیہ ناجائز منافع خوروں کے خلاف متحرک ہے اور گزشتہ24 گھنٹوں کے دوران 18گرانفروش گرفتار اور ان کے خلاف مقدمات درج کر لئے گئے ہیں اس دوران 624 دکانوں کی چیکنگ کی گئی اور ان میں سے،144 دکاندار اوور چارجنگ میں ملوث پائے گئے۔اوور چارجنگ کرنے والے دکانداروں کو 2 لاکھ 26 ہزار 6 سو روپے جرمانہ کیا گیا۔اسسٹنٹ کمشنر سٹی عابدہ فرید نے ٹی بی ہسپتال روڈ پر گرانفروشی کرنیوالے 4 دکانداروں (بقیہ نمبر36صفحہ6پر)

کو جیل بھیج دیا۔ انہوں نے خانیوال روڈ پر گندم کے غیر قانونی سیل پوائنٹ پر بھی چھاپہ مار کرسیل پوائنٹ کے مالک کو گرفتارکرا کے اس کے خلاف مقدمہ درج اور اس کی گندم ضبط کرکے محکمہ خوراک کے حوالے کر دی گئی ہے۔سیکرٹری آر ٹی اے نے معصوم شاہ روڈ پر سبزی فروشوں اور کریانہ مرچنٹس کے خلاف ایکشن کے دوران ریٹ لسٹ آویزاں نہ کرنے پر 2 دکاندارگرفتار اور گرانفروشوں پر 33 ہزار جرمانہ بھی عائد کر دیا ہے۔دریں اثناء ملتان ضلعی انتظامیہ کے افسران کے روزانہ کی بنیادوں پر سبزی و فروٹ منڈی کے دورے جاری ہیں۔گزشتہ روز ایڈیشنل ڈپٹی کمشنرریونیو محمد طیب خان نے سبزی و فروٹ منڈی کا وزٹ کیا۔سیکرٹری مارکیٹ کمیٹی اعجاز سلیم بھی ان کے ہمراہ تھے۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو نے سبزی اور پھلوں کی آکشن کو چیک کیا،منڈی اور اس کے اطراف میں تجاوزات اور صفائی کا جائزہ لیا۔انہوں نے سبزی و فروٹ منڈی بارے رپورٹ ڈپٹی کمشنر کو ارسال کردی ہے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ انتظامیہ کے افسران کی سبزی منڈی وفروٹ منڈی کے وزٹ سے سپلائی چین میں بہتری آئی ہے،پرائس مجسٹریٹس کے متحرک ہونے سے پھلوں اور سبزی کے نرخ میں واضح کمی آئی ہے،سبزی منڈی کے مین گیٹ کے باہر مرکزی شاہراہ پر ریڑھیاں اور ٹھیلے ٹریفک کے لئے رکاوٹ پیدا کررہے ہیں،سبزی منڈی میں سکیورٹی کی صورتحال مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے۔علاوہ ازیں اسسٹنٹ کمشنر سٹی عابدہ فرید نے بھی گزشتہ روز غلہ منڈی کے تاجروں سے ملاقات کی اور انہیں اشیائے ضروریہ کے سٹاک کے گودام تین یوم کے اندر رجسٹر کرانے کی ہدایت کی۔ انہوں نے سیکرٹری مارکیٹ کمیٹی اعجاز سلیم کو بھی ہدایت کی ہے کہ دو یوم کے اندر اشیائے ضروریہ بارے کریانہ مرچنٹس کے منافع کا تعین کیا جائے۔

گرفتار

مزید :

ملتان صفحہ آخر -