جامپور:5ماہ سے تنخواہیں بند، سینٹری ورکرز کاٹریفک چوک پرمظاہرہ

  جامپور:5ماہ سے تنخواہیں بند، سینٹری ورکرز کاٹریفک چوک پرمظاہرہ

  

جام پور(نامہ نگار) سینٹری ورکرز جام پورنے کی پانچ ماہ سے تنخواہیں نہ ملنے پر ٹریفک چوک ٹائر جلاکر بند کر دیا سینٹری ورکرز کا کہنا تھا کہ اس لاک ڈاؤن میں ہمارے چھوٹے(بقیہ نمبر27صفحہ6پر)

چھوٹے بچے بھوک مررہے ہیں اور گھروں کے چولہے ٹھنڈے ہوچکے ہیں سی او میونسپل کمیٹی جام پور کو کئی بار توجہ دلائی لیکن کوئی شنوائی نہیں ہوئی چیف سینٹری انسپکٹر میونسپل کمیٹی ملک ظفر اقبال گدارہ نے ملازمین سے مذاکرات کرکے احتجاج ختم کرایا اور عید سے پہلے تنخواہیں دینے پر راستہ کھول دیا گیا سینٹری ورکرز نے کہا کہ اگر ہمیں تنخواہیں نہ ملی تو ہم میونسپل کمیٹی کے سامنے دھرنا دیں گے سینٹری ورکرز جام پور نے ٹریفک چوک پر احتجاج کرتے ہوئے چاروں طرف روڈز بلاک کردیا سی او سمیت دیگر افسران کے خلاف نعرے بازی کرنے کے علاوہ انہوں نے کہا کہ ایک تو ہمیں مستقل کیا جائے اور تنخواہیں بر وقت ادا کی جائیں تاکہ ہمارے گھروں کے چولہے جل سکیں تقریباً ایک گھنٹہ بعد چیف سینٹری انسپکٹر ظفر اقبال گدارہ نے آکر احتجاجی مظاہرین سے مذاکرات کرکے عید سے پہلے تنخواہیں دینے کا وعدہ کیا جس پر سینٹری ورکرز نے احتجاج کو ختم کرکے روڈ بحال کردیا ہے۔

ختم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -