آسٹریلیا کے مایہ ناز سابق سپنر نے بھی پاک، بھارت ٹیسٹ سیریز کی تجویز دیدی

آسٹریلیا کے مایہ ناز سابق سپنر نے بھی پاک، بھارت ٹیسٹ سیریز کی تجویز دیدی
آسٹریلیا کے مایہ ناز سابق سپنر نے بھی پاک، بھارت ٹیسٹ سیریز کی تجویز دیدی

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) آسٹریلین کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز سابق سپنر بریڈ ہوگ نے پاکستان اور بھارت کے درمیان ٹیسٹ سیریز کرانے کی تجویز دیتے ہوئے کہا ہے کہ شائقین کرکٹ اس وقت بہترین کرکٹ دیکھنے کے خواہاں ہیں۔

تفصیلات کے مطابق بریڈ ہوگ نے اپنے بیان میں کہا کہ کورونا وائرس کی موذی وباءنے کرکٹ کے نئے دور آغاز کے دروازے بھی کھول دئیے ہیں اور شائقین کرکٹ میں بہترین کرکٹ دیکھنے کی بھوک بڑھ گئی ہے۔ ان کا کہنا تھا ”شائقین کرکٹ کے بہترین مقابلے دیکھنا چاہتے ہیں، لہٰذا ٹیسٹ چیمپین شپ کو کچھ دیر کیلئے ایک سائیڈ پر رکھیں اور ایک، دو ایسی سیریز کا انعقاد کروائیں جو پوری دنیا میں کرکٹ کی دلچسپی میں اضافے کا باعث بن جائیں۔“

انہوں نے کہا کہ ”سب سے پہلے تو اس سال بھارت اور آسٹریلیا کے درمیان پانچ میچوں پر مشتمل ٹیسٹ سیریز منسوخ کریں اور ایشز سیریز پر توجہ دیں لیکن اگر اس معاملے کا دوسرا رخ دیکھیں تو بھارت آسٹریلیا کیخلاف نہیں کھیلے گا تو پھر کہاں جائے گا؟ وہ کرسمس کے دنوں میں پاکستان کیخلاف کھیلیں گے، دو میچ پاکستان میں کروائیں، دو بھارت میں کروائیں۔“

بریڈ ہوگ نے پاک، بھارت ٹیسٹ سیریز کیلئے تین وجوہات بھی پیش کیں اور کہا ”پہلی بات تو یہ ہے کہ بابراعظم یا ویرات کوہلی، ان دونوں میں سے بہتر کون ہے؟ یہ اس سیریز میں پتہ چل جائے گا۔ پھر جسپریت بمرا اور شاہین شاہ آفریدی کا مقابلہ بھی ہو گا۔ آخر میں روی چندرن ایشون اور یاسر شاہ کا مقابلہ ہو گا اور شائقین کو ایشین کنڈیشنز میں دو بہترین سپنرز ایک دوسرے پر سبقت لے جانے کی کوشش کرتے نظر آئیں گے جبکہ یہ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) اور دونوں ممالک کے کرکٹ بورڈز کیلئے بھی زبردست سیریز رہے گی۔“

مزید :

کھیل -