سپریم کورٹ میں ماں نے اپنے دونوں بچو ں کیلئے 10 تولہ سونا قربان کر دیا 

سپریم کورٹ میں ماں نے اپنے دونوں بچو ں کیلئے 10 تولہ سونا قربان کر دیا 
سپریم کورٹ میں ماں نے اپنے دونوں بچو ں کیلئے 10 تولہ سونا قربان کر دیا 

  

 اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن )سپریم کورٹ میں ماں نے اپنے دونوں بچو ںکیلئے 10 تولہ سونا قربان کر دیا ۔

نجی ٹی وی ایکسپریس نیوز کی رپورٹ کے مطابق سپریم کورٹ میں 2 بچوں کی والدہ کو 10 تولہ سونا دینے سے متعلق پشاور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف والد کی درخواست پر سماعت ہوئی، ہائی کورٹ نے اپنے فیصلے میں والدہ مہناز بی بی کو جہیز کا 10 تولہ سونا دینے کا حکم دیا تھا جس پر بچوں کے والد زین اللہ نے ہائیکورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کیا۔

سماعت کے دوران جسٹس یحیی آفریدی نے وکیل درخواست گزار سے استفسار کیا کہ آپ دس تولہ کا مقدمہ کسی بھی عدالتی فورم پر ثابت نہیں کرپائے، ہائیکورٹ کے 10 تولہ سونا جہیز میں دینے کے فیصلہ کی بنیاد کیا ہے جب کہ اگر والدہ کو 10 تولہ سونا کے عوض دونوں بچے مل جائیں تو کیا یہ ٹھیک ہوگا۔وکیل والدہ نے کہا کہ والدہ 2 بچوں کے لیے دس تولہ سونا قربان کرنے کے لیے تیار ہے جس پر عدالت نے والدین کی رضا مندی سے کیس کا فیصلہ کردیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -