پی ٹی آئی جان بوجھ کر فوج کو سیاست میں دھکیل رہی ہے، گورنر فیصل کنڈی

   پی ٹی آئی جان بوجھ کر فوج کو سیاست میں دھکیل رہی ہے، گورنر فیصل کنڈی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

 پشاور (این این آئی) گورنر خیبرپختونخوا فیصل کریم کنڈی نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی 2 مختلف آراء ہیں، پی ٹی آئی آرمی چیف اور ڈی جی آئی ایس آئی سے بات چیت کا کہہ رہی ہے۔ایک انٹرویومیں فیصل کریم کنڈی نے کہا کہ پی ٹی آئی سیاست میں اسٹیبلشمنٹ کی دخل اندازی کی بات بھی کررہی ہے، یہ جان بوجھ کر فوج کو سیاست میں دھکیل رہے ہیں۔گورنر فیصل کریم کنڈی نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کو سیاسی جماعتوں سے ہی بات چیت کرنا پڑتی ہے، مولانا فضل الرحمٰن نے ہمیشہ جمہوری راستے سے جدوجہد کی ہے، مولانا فضل الرحمن سمیت تمام سیاسی جماعتوں سے بات چیت کریں گے۔فیصل کریم کنڈی نے کہا کہ سیاسی جماعتوں کو انتخابات سے متعلق تحفظات ہوں گے، تحفظات کے ازالے کے لیے متعلقہ فورم سے رجوع کرسکتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی نے وفاقی کابینہ کا حصہ بننے کا فیصلہ نہیں کیا، کابینہ کا حصہ بننے کا فیصلہ سینٹرل ایگزیکٹیو کمیٹی کے فورم پر کیا جاتا ہے۔فیصل کریم کنڈی نے کہا کہ حلف برداری میں وزیراعلیٰ یا کابینہ کی نمائندگی نہ ہونے پر تکلیف نہیں، مسائل کے حل کیلئے وزیراعلیٰ ہاؤس سمیت کہیں بھی جاسکتا ہوں، ایسا نہ ہو کہ وفاق اور صوبے کی سیاسی چپقلش میں نقصان عوام کا ہو۔انہوں نے کہا کہ صوبے کا وکیل بن کر مسائل کے حل کیلئے کردار ادا کروں گا، وفاق سے صوبے کے لیے زیادہ سے زیادہ فنڈز کے حصول کو یقینی بنائیں گے، وفاق سے جڑے صوبے کے مسائل افہام و تفہیم سے حل کریں گے، خیبرپختونخوا کو امن اور معاشی بیحالی جیسے مسائل کا سامنا ہے۔انہوں نے کہا کہ شیرپاؤ، سراج الحق سمیت سیاسی شخصیات سے رابطہ کر کے انہیں اعتماد میں لیا، پشاورہائی کورٹ نے صوبائی حکومت کو خصوص نشستوں پر حلف لینے کا حکم دیا ہے، صوبائی حکومت ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ گئی۔انہوں نے کہاکہ صوبائی حکومت توہین عدالت کی مرتکب بھی ہو سکتی ہے۔

 گورنر کے پی

مزید :

صفحہ اول -