وائلڈ لائف پارکس میں جانوروں اور پرندوں کی تعدادبارے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت

وائلڈ لائف پارکس میں جانوروں اور پرندوں کی تعدادبارے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(اپنے نمائندے سے)ڈائریکٹر جنرل جنگلی حیات پنجاب خالد ایاز نے صوبہ بھر کے وائلڈ لائف پارکس اور چڑیا گھروں کے انچارج افسران کو ایک ہفتہ کے اندر پارکس میں موجود جانوروں اور پرندوں کی تعداد اورگنجائش کے بارے تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے ،انہوں نے یہ بات دفتر میں پارکس اور چڑیا گھروں میں موجود جانوروں کی دیکھ بھال بارے منعقدہ ایک اعلیٰ سطحی اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی جس میں ہیڈکوارٹر آفس کے تمام اعلیٰ افسران موجود تھے۔ انہوں نے کہاکہ انچارج افسران کی رپورٹس کی روشنی میں پارکس میں موجود جانوروں و پرندوں کی تعداد ضرورت سے زائد ہونے کی صورت میں انہیں ایسے وائلڈ لائف پارکس میں منتقل کیا جائے گا جہاں اس نسل کے پرندے اور جانور موجود نہیں یا ان کی تجویزکردہ تعداد سے کم ہے،خالد ایاز نے مزیدکہاکہ تمام افسران اپنے متعلقہ جنگلی حیات کے پارکس میں سیاحوں اور خصوصاً بچوں کیلئے سہولیات میں اضافے بارے تجاویز دیں ۔



تاکہ ان کا تفصیلی جائزہ لے کر ان پر عملدرآمد کیاجاسکے۔ انہوں نے کہاکہ وائلڈ لائف پارکس سے ہونے والی آمدنی اور خرچ بارے رپورٹ بھی پیش کی جائے اور پوری تحقیق اور غوروخوض کے بعد آمدنی میں اضافے بارے تجاویز دی جائیں مگر اس بات کا خاص طور پر خیال رکھا جائے کہ اس رپورٹ میں تفریح کیلئے آنے والوں کی ٹکٹوں کی قیمت میں اضافہ کی کوئی تجویزنہ دی جائے تاکہ پارکس آنے والوں پر کوئی اضافی بوجھ نہ پڑے۔