پولیس مخالفین کے ہمراہ شہری کے گھرگھس گئی،خواتین پر تشدد

پولیس مخالفین کے ہمراہ شہری کے گھرگھس گئی،خواتین پر تشدد

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

لاہور(کر ائم سیل)مخالفین سے ساز باز کر کے پولیس کا شہری کے گھر میں گھس کر معذور لڑکے پر تشددمعمر خاتون اور اس کی حاملہ بہو کو ٹھڈے مارتے رہے۔گھر میں موجود قیمتی سامان لوٹ لیاجبکہ فرنیچر سمیت لاکھوں روپے مالیت کادیگر سامان توڑ دیا۔تھانے میں انصاف کے لیے جانے پر پولیس نے الٹا مدعی پر پولیس مقابلہ کا مقدمہ درج کر دیا۔متاثرہ خاندان انصاف کے حصول کے لیے آئی جی آفس پہنچ گیا۔تفصیلا ت کے مطابق فیکٹری ایریا کے علاقہ نظام پورہ کی رہائشی رضیہ بی بی نے ’’پاکستان ‘‘سے گفتگو کر تے ہو ئے کہا کہ مورخہ 2ستمبر 2015کو رات 9بچے کے قریب اپنے 15سالہ بیٹے اور نند گلشن بی بی کے ساتھ گھر میں موجود تھی کہ ایس آئی بشارت گجر ،ایس آئی رانا تجمل،ولی محمد پاشا،اے ایس آئی کانسٹیبل محسن علی دیگر 5ملازمین کے ہمراہ ہمارے گھر میں گھس آئے اور آتے ہی ہمار ے گھر کی تلاشی لینا شروع کر دی ۔ہمارے گھر میں مو جود دو 2ایل سی ڈیز،5تولہ طلائی زیورات ،3گلیکسی مو بائلز اور 7کمبل گھر میں موجود 4لاکھ روپے کی نقدی جو ہم نے پلاٹ خریدنے کے لیے رکھی تھی اٹھا کر جانے لگے تو ہم نے وجہ پوچھی تو ملازمین نے گھر میں موجود معذور بچے مجھے معمر خاتون اور میری حاملہ دیورانی کو دیگر خواتین سمیت ٹھڈوں سے مارنا شروع کر دیا اورگندی گالیاں نکالتے رہے۔اس دوران پولیس ملازمین نے گھر میں موجود فرنیچر ،فریج واشنگ مشین،برتن اور گھریلو ضرورت کا ہر قسم کا سامان توڑ دیا ۔جس کی مالیت 10 لاکھ سے زائد کی بنتی ہے ۔ جاتے ہوئے ہمارے گھر آئی ہو ئی میری نندکی گاڑی اور میرے بیٹے کو بھی ساتھ لے گئے۔پولیس نے ہمارے مخالفین سے ساز باز کر کے بلاوجہ ہمارا لاکھوں روپے کا نقصان کیا ہے اور اختیارات کا ناجائز استعمال کر تے ہو ئے ہمارے گھر میں گھس کر خواتین کو تشدد کانشانہ بنایا ہے ہماری اعلیٰ حکام سے اپیل ہے کہ ہمیں انصاف فراہم کیا جا ئے۔

مزید :

علاقائی -