نئے پاکستان کا خواب معیاری تعلیم کی فراہمی سے مشروط ہے، مراد راس

نئے پاکستان کا خواب معیاری تعلیم کی فراہمی سے مشروط ہے، مراد راس

لاہور(لیڈی رپورٹر)صوبائی وزیر سکولز ایجوکیشن مراد راس نے کہا ہے کہ نئے پاکستان کا خواب معیاری تعلیم کی فراہمی سے مشروط ہے کیونکہ تعلیم قومی ترقی کی بنیاد ہے ۔اس حوالے سے صوبائی محکمہ سکولز ایجوکیشن جدید اصلاحات متعارف کروا رہا ہے اور سکولوں میں عالمی ماڈلز متعارف کروائے جائیں گے تا کہ بچوں میں دنیا کے ساتھ چلنے کا اعتماد اجاگر ہو۔ہماری کوشش ہے کہ ہر سرکاری سکول اپنی کارکردگی کی بنا پر نجی سکولوں کو پیچھے چھوڑ دے اوروالدین ایلیٹ سکولوں کے پیچھے بھاگنے کی بجائے سرکاری سکولوں کو ترجیح دیں۔ یہ بات انہوں نے ایجوکیشنل ریفامز کے روڈ میپ کی تیاری کے حوالے سے پنجاب کریکولم اینڈ ٹیکسٹ بک بورڈ آفس کے کمیٹی روم میں منعقدہ ایک اہم اجلاس کی صدارت کر تے ہوئے کہی۔اجلاس میں سرکاری سکولوں میں جدیدایجوکیشنل ریفامز کے نفاذ سے متعلق مختلف تجاویز پر غورو خوض کیا گیا۔صوبائی وزیر مرد راس نے قائدا عظم اکیڈمی فار ایجوکیشنل ڈویلپمنٹ کے تعلیمی کردار کو مزید موثر بنانے کی ضرورت پر زور دیا تا کہ سرکاری سکولوں کے اساتذہ کی تربیت کا ذمہ دار یہ ادارہ ورلڈ کلاس ایجوکیشنل تھنک ٹینک کے طور پر ابھرے ۔

اجلاس کے دوران آؤٹ آف سکول بچوں کی سکولوں تک رسائی، رٹہ سسٹم کے خاتمہ،سرکاری سکولوں میں معیاری تعلیم کی فراہمی،اساتذہ کی جدید خطوط پر ٹریننگ اور اساتذہ کی مانیٹرنگ کے موثرنظام کی ضرورت کے ساتھ ساتھ سکولوں میں ڈبل شفٹ کے اجراء اور اضافی کلاس رومز کی تعمیر سمیت مختلف تجاویز زیر غورلائی گئیں۔شرکا نے تعلیمی اصلاحات کے جامع پروگرام کی کامیابی کیلئے نجی کاروباری اداروں کاروباری سماجی ذمہ داری کے اصول کے تحت اعتماد میں لینے پر اتفاق کیا تا کہ شعبہ تعلیم کی ترقی میں نجی شعبے کو بھی شامل کیا جا سکے۔اجلاس میں سپیشل سیکرٹری سکولز غلام فرید، متعلقہ افسران اور ماہرین تعلیم نے شرکت کی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4