قیام امن اورملکی سلامتی کیلئے تمام جماعتوں کو متحد ہوناپڑے گا، عون عباس بپی

  قیام امن اورملکی سلامتی کیلئے تمام جماعتوں کو متحد ہوناپڑے گا، عون عباس بپی

  



کبیروالا(نامہ نگار)عمران خان پاکستان کی تقدیر بدلنے کی کوششوں میں مصروف ہیں،اقوام عالم کا اعتماد بحال کر نے کے لئے کرپشن کے ناسور کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنا ہوگا، قیام امن اور ملکی سلامتی کے تما م جماعتوں کو متحد ہونا ہو گا، جمہوریت کے استحکام اور قانو ن سازی کے لئے احتجاج کی بجائے اپوزیشن کو اپنا مثبت کردار ادا کرنا ہوگا، احتجاجی سیاست سے معاشی ترقی کے سفر پر منفی اثرات مرتب ہوں گے، ملک چلانے کے لئے پار لیمان کی بالادستی ہر حال قائم رکھنا ہوگی، ان خیالا ت کا اظہار ایم ڈی پاکستان بیت المال عوان عبا س بپی نے مقامی سماجی راہنماءحاجی محمد ارشد سنگا سے ملاقات کے دوران کیا ،انہوں نے کہا کہ(بقیہ نمبر11صفحہ12پر )

مضبوط اور مستحکم پاکستان کے لئے جمہوری عمل کو ہر حال رواں دواں رکھنا ہوگا انہوں نے کہا کہ پارلیمان کی بالادستی کے لئے آئین اور قانون کی مکمل پاسداری برقرار رکھنے کے لئے تمام سیاسی جماتوں کو اپنا مثبت کردارادا کرنے آگے آنا ہوگا،انہوں نے کہا کہ اسوقت ملک ماضی کے مقا بلے میں سنگین معاشی بحران کا سامنا کر رہا ہے جس سے نمٹنے کے لئے حکو مت بھر پور کوششیں کررہی ہے انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان پر بین الالقوامی اعتما د کی بحالی کے لئے کڑا احتساب کر نا وقت کی ضرورت بن چکا ہے ،انہوں نے مزید کہا کہ قوم وزیر اعظم عمران خان سے بہت سے امیدیں وابسطہ کئے ہوئے ہے ،اور قوم امید رکھتی ہے کہ کڑے احتساب کے نعرے پر عمل کرتے وزیر اعظم پاکستان عمران خان قوم کی توقعات پر پورا اتریں گے۔ بیت المال پاکستان کے منیجنگ ڈائریکٹر عون عباس بپی سے ممبر نیشنل کونسل تحریک انصاف سردار شہباز احمد خان سیال ایڈووکیٹ کی قیادت میںملاقات کرنےوالے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیر اعظم عالمی سطح پر پاکستان کی بہتر ین تصویر پیش کےلئے کوشاں ہیں ،حکومت کی بہتر خارجہ پالیسی اور شاندار حکمت عملی کے نتیجے میں اقوام عالم میںکشمیر کے حوالے سے پاکستان کے موقف کو پذیرائی حاصل ہورہی ہے ،معاشی حوالوں سے بہتر ہوتی ہوئی صورت حال کے پیش نظر آنیوالے دنوں میں مہنگائی کم ہونے کے قوی امکانات ہیں، ہمیں ملکی ترقی کےلئے احتجاج اور انتشار کی سیاست سے گریز کرنا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے پاکستان بیت المال جیسے ملک گیر فلاحی ادارے کو بہتر اور فعال بنانے کی جو اہم ذمہ داری سونپی ہے، اسے اپنا مذہبی اور قومی فریضہ سمجھ کر ادا کررہا ہوں، ملک کے پسماندہ طبقات کی بحالی اور ان کی زندگیوں میں خوشگوار تبدیلی لانے کے جذبے کے ساتھ پاکستان بیت المال حقیقی معنوں میں کوشاں ہے۔انہوں نے ملاقات میں پاکستان بیت المال کے مقاصد، کارکردگی میں مزید بہتری لانے، مستحق افراد کی بروقت داد رسی اور مختلف ذرائع ابلاغ کے ذریعے عوام میں بیت المال سے متعلق آگاہی بارے کئے گئے اقدامات سے روشناس کراتے ہوئے بتایا کہ ملک میں پانچ لاکھ بچے تھیلیسیمیا کے مرض کا شکار ہیں پاکستان بیت المال معصوم بچوں کو تھیلیسیمیا سے بچاﺅ کی قومی پالیسی کے مطابق اپنا کردارادا کرنے کےلئے کوشاںہے اور ایسے اقدامات کو یقینی بنایاجارہا ہے ،جس سے پاکستان بیت المال کی جانب سے تھیلیسیمیا اور امراض قلب کے مستحق مریضوں کے لیے اسٹنٹ کی مفت فراہمی کو ممکن بنایاجا سکے۔انہوںنے کہا کہ پاکستان بیت المال نے وزیراعظم عمران خان کے وژن کے عین مطابق پاکستان کو ریاست مدینہ کے رول ماڈل پر استوار کرنے کے لیے اقدامات کا آغاز کردیا ہے، جس سے مستحق افراد کو ریلیف حاصل ہورہا ہے ،ملک بھر سے سول سوسائٹی سمیت تمام طبقات کے لوگوں کی جانب سے پاکستان بیت المال کو بھجوائی جانے والی تجاویز اور سفارشات پر بھرپور توجہ دی جاتی ہے۔

عون عباس

مزید : ملتان صفحہ آخر